بادامی باغ ، اپنے3سالہ بچے کو قتل کرنے والے والد سے تفتیش جاری

بادامی باغ ، اپنے3سالہ بچے کو قتل کرنے والے والد سے تفتیش جاری

لاہور(وقائع نگار) بادامی باغ کے علاقہ میں اپنے ہی3سالہ بچے کو قتل کرنے والے والد سے تفتیش جاری ،ملزم نے اپنی بیوی سے لڑائی جھگڑے اور اس پر بدچلنی کے شبہ پر اپنے ہی بیٹے کو قتل کیا۔تفصیلات کے مطابق چند روز قبل بادامی باغ کے علاقہ میں گندے نالے کے قریب سے مقامی افراد کو ایک 3سالہ بچے کی لاش پڑی ہوئی ملی جس پر انہوں نے پولیس کو اطلاع دی جس نے موقع پر پہنچ کر شواہد اکٹھے کر کے لاش کو پوسٹ مارٹم کے لئے مردہ خانہ میں منتقل کر دیا۔پولیس کے مطابق ابتدائی تفتیش میں ہی مقتول کے باپ کی جانب سے مختلف بیانات دینے پراس سے تفتیش کی تو اس نے قتل کا اعتراف کر لیا۔ ملزم شاہد علی نے بتایا کہ اس کی اپنی بیوی سے لڑائی ہوتی رہتی تھی اور اس کو بیوی پر بد چلنی کا شبہ تھا۔ایک روز ان کی اسی طرح سے لڑائی ہوئی تو وہ گھر سے باہر نکل گیا اور اپنے بیٹے دانش کو بھی ساتھ لے گیا ، طیش میں آ کر اس نے اپنے بیٹے کو مار ڈالا اور اس کی لاش کو گندے نالہ کے ساتھ پھینک دیا۔پولیس کے مطابق ملزم کو جب سے گرفتار کیا گیا ہے اس پر غشی کے دورے پڑ رہے ہیں اور وہ پچھتاوے کی وجہ سے ہر وقت روتا ہی رہتا ہے جبکہ اس نے ایک دن سے کچھ کھایا بھی نہیں ہے جس کی وجہ سے اس کی حالت خراب ہے اگر اس کی یہی حالت رہی تو اس کو ہسپتال لیجانا پڑے گا ۔دوسری جانب مقدمہ کے حوالے سے تمام تر بیانات قلمبند کر لئے گئے ہیں جبکہ ملزم کا بیان بھی لے لیا گیا ہے ۔مقتول کی ابتدائی پوسٹ مارٹم رپورٹ سامنے آ گئی ہے جس میں یہ ثابت ہوا ہے کہ اس کی موت سر پر ضرب لگنے سے ہوئی جبکہ اس کے گلے پر بھی نشانات ملے ہیں ۔البتہ اصل حقائق مکمل پوسٹ مارٹم رپورٹ سامنے آنے پر ہی واضح ہوں گے۔

مزید : علاقائی

لائیو ٹی وی نشریات دیکھنے کے لیے ویب سائٹ پر ”لائیو ٹی وی “ کے آپشن یا یہاں کلک کریں۔


loading...