شناختی کارڈ بلاک کرنے پر نادرا کو ایک ماہ میں فیصلہ کرنے کا حکم

شناختی کارڈ بلاک کرنے پر نادرا کو ایک ماہ میں فیصلہ کرنے کا حکم

لاہور(نامہ نگارخصوصی )اوورسیز شناختی کارڈ بلاک ہونے کے باعث ایک سال سے وطن واپس آنے سے قاصر رہنے والے خاندان نے دادرسی کے لئے لاہور ہائیکورٹ سے رجوع کرلیا، برطانیہ میں مقیم لاہوری خاندان کے سربراہ طالب چودھری نے لاہور ہائی کورٹ سے رجوع کرتے ہوئے موقف اختیار کیا ہے کہ وہ اپنے خاندان سمیت برطانیہ میں مقیم ہے، نادرا نے جعلی دستاویزات کی بنیاد پر شناختی کارڈ بنوانے کے الزام کے تحت اس سمیت اس کے پورے خاندان کے اووسیز شناختی کارڈ بلاک کر دیئے ہیں۔ درخواست گزار کے وکیل گلفام علی نے عدالت کو بتایا کہ طالب چودھری کی اہلیہ جبین اختر اور بچے شناختی کارڈ بلاک ہونے کی وجہ سے ایک سال سے برطانیہ میں پھنسے ہوئے ہیں، عدالت عالیہ نے ڈپٹی ڈائریکٹر نادرا کو شناختی کارڈ بلاک کرنے کے اس معاملہ پر ایک ماہ میں فیصلہ کرنے کا حکم جاری کرتے ہوئے درخواست نمٹا دی ۔

شناختی کارڈ،بلاک

مزید : علاقائی