پانامہ کیس پرحکومت کے پاس کوئی جواب نہیں ، فتح عوام کی ہو گی : سراج الحق

پانامہ کیس پرحکومت کے پاس کوئی جواب نہیں ، فتح عوام کی ہو گی : سراج الحق

 اسلام آباد (اے این این)امیر جماعت اسلامی پاکستان سینیٹر سراج الحق نے کہاہے کہ پانامہ کیس پر حکومت کے پاس کوئی جواب نہیں ہے، حکومتی بوکھلاہٹ سے لگتا ہے یہ کیس عوام ہی جیتیں گے۔ یہ کیس سیاسی تعصبات یا کسی کو ذلیل کرنے کا مسئلہ نہیں ہے، اگر ملک کیلئے پانچ ،چھ ہزار لوگ جیلوں میں چلے جائیں تو بڑی بات نہیں،ان خیالات کا اظہار انہوں نے سپریم کورٹ کے باہر میڈیا کے نمائندوں سے گفتگو کرتے ہوئے کیا۔اس موقع پر نائب امیر اسداللہ بھٹو اور جماعت اسلامی اسلام آباد کے امیر زبیر فاروق و دیگر بھی موجود تھے ۔سینیٹر سراج الحق نے کہاکہ حکومتی وکلا بوکھلاہٹ کا شکار ہیں اوراب عدالت میں ایک اور خط پیش کردیا گیا ہے۔ یہ کیس سیاسی تعصبات یا کسی کو نیچا دکھانے کیلئے نہیں بلکہ مسئلہ ملکی وقار کی بقا اورقومی تحفظ کا ہے، اگر ملک کیلئے پانچ یا چھ ہزار لوگ جیلوں میں چلے جائیں تو بڑی بات نہیں ہے۔انہوں نے کہا کہ جماعت اسلامی نے کرپشن کیخلاف فیصلہ کن جنگ کا آغاز کیا، جس کا مقصد یہ ہے کہ پاکستان کو لوٹنے والوں کا احتساب ہونا چاہئے۔انہوں نے کہا کہ میں سرکاری وکیل کو سلام پیش کرتا ہوں کہ وہ اتنا کمزور مقدمہ لڑ رہاہے۔ ہماری نیت صاف ہے اورپاکستان کی اصلاح چاہتے ہیں ۔ پاکستان کی اصلاح کے لئے کرپٹ لوگوں کے خلاف کارروائی کی ضرورت ہے جس کی شروعات نوازشریف اور ان کے خاندان سے ہو اور اس کے بعد تمام لوگوں کے خلاف کارروائی ہو جس کا نام پانامہ لیکس میں ہے۔ مریم نواز کے وکیل کی طرف سے عدالت میں آج جمع کرائے گئے کاغذات پر تبصرہ کرتے ہوئے امیر جماعت اسلامی نے کہا کہ لگتا ہے کہ حکمرانوں نے ایک فیکٹری لگائی ہوئی ہے جو یہ نئے نئے کاغذات تیار کر رہی ہے۔ پانامہ لیکس ایک کہانی ہے جس کا آغاز حکمران خاندان اور اس کا اختتام ان تمام کرداروں پر ہوتا ہے جنہوں نے پاکستان کو لوٹا ہے۔ پارلیمان میں وزیراعظم نوازشریف نے سرکاری حیثیت کو اپنے خاندانی مفاد کا دفاع کرنے کے لئے استعمال کیا۔

سراج الحق

مزید : علاقائی

لائیو ٹی وی نشریات دیکھنے کے لیے ویب سائٹ پر ”لائیو ٹی وی “ کے آپشن یا یہاں کلک کریں۔


loading...