12سالہ بچی کو منشیات کے مقدمے میں ملوث کرنے کا سخت نوٹس،رہائی کا حکم

12سالہ بچی کو منشیات کے مقدمے میں ملوث کرنے کا سخت نوٹس،رہائی کا حکم

لاہور(نامہ نگارخصوصی )لاہور ہائیکورٹ نے 12 سالہ بچی کو منشیات کے مقدمے میں ملوث کرنے کا سخت نوٹس لیتے ہوئے کمسن علیشباہ کو فوری رہا کرنے کا حکم دے دیا، جسٹس وقاص رؤف مرزا کی سربراہی میں دو رکنی بنچ نے علیشاہ کی ضمانت کی درخواست پر سماعت کی، کمسن ملزمہ کے وکیل نے موقف اختیار کیا کہ علیشباہ کے والدین سات کلو منشیات سمگلنگ کے مقدمے میں گرفتار ہیں، تھانہ لکسیاں سرگودھا پولیس نے جب اصل ملزمان کو گرفتار کیا تو کمسن علیشباہ بھی گاڑی میں موجود تھی اور صرف گاڑی میں موجود ہونے کی بنا پرعلیشباہ کو بھی مقدمے میں ملوث کر دیا گیا، انہوں نے مزید موقف اختیار کیا کہ 12سالہ بچی کو کیا پتہ کہ منشیات کیا ہے اور کہاں لے جائی جا رہی ہے۔ عدالت نے کمسن بچی کو منشیات کے مقدمے میں ملوث کرنے پر پولیس پر اظہار برہمی کرتے ہوئے ایک ایک لاکھ کے ضمانتی مچلکوں کے عوض اسے فوری رہا کرنے کا حکم دے دیا۔

مزید : صفحہ آخر

لائیو ٹی وی نشریات دیکھنے کے لیے ویب سائٹ پر ”لائیو ٹی وی “ کے آپشن یا یہاں کلک کریں۔


loading...