لیبرکورٹ اوراپیلیٹ کورٹ کے فیصلے کو کالعدم قرار دینے کی درخواست

لیبرکورٹ اوراپیلیٹ کورٹ کے فیصلے کو کالعدم قرار دینے کی درخواست

لاہور(نامہ نگارخصوصی )لاہورہائیکورٹ کے مسٹر جسٹس شجاعت علی خان نے واسا ملازمین کو اوور ٹائم کی ادائیگی کے لیبر کورٹ کے فیصلے کو کالعدم قرار دینے کے لئے دائر درخواست پر واسا ایمپلائز یونین کو نوٹس جاری کرتے ہوئے جواب طلب کر لیاہے۔ واسا کے وکیل زبد الحسن نے عدالت کو بتایا کہ واسا اور ملازمین کے درمیان 500روپے ماہانہ اوور ٹائم کی ادائیگی کا معاہدہ طے پایا جس پر مکمل عمل درآمد کیا گیا۔اوور ٹائم کی ادائیگی کے حوالے سے آڈٹ پیرا میں اعتراض آنے کے بعد اسے واسا کی جانب سے ختم کر دیا گیا۔ واسا ملازمین نے اس فیصلے کو تسلیم کرنے سے انکار کرتے ہوئے لیبر کورٹ سے رجوع کیا جس پر لیبر کورٹ نے واسا ملازمین کے بقایااوور ٹائم کی ادائیگی کا حکم دیا۔انہوں نے کہا کہ باہمی معاہدے کی شق کے تحت یہ معاہدہ کسی بھی وقت ختم کیا جا سکتا تھا ،عدالت لیبرکورٹ اور لیبراپیلیٹ کورٹ کے فیصلے کو کالعدم قرار دے۔

مزید : صفحہ آخر

لائیو ٹی وی نشریات دیکھنے کے لیے ویب سائٹ پر ”لائیو ٹی وی “ کے آپشن یا یہاں کلک کریں۔


loading...