بحریہ ٹاؤن اور سعودی جرمن ہاسپٹل کے درمیان ہیلتھ کیئرمعاہدہ

بحریہ ٹاؤن اور سعودی جرمن ہاسپٹل کے درمیان ہیلتھ کیئرمعاہدہ

دبئی(خصوصی رپورٹ)بحریہ ٹاؤن پاکستان، ایشیا کے سب سے بڑے پراپرٹی ڈویلپر گروپ اورسعودی جرمن ہاسپٹل ،دبئی میں بیت البیٹرجی میڈیکل کمپنی کے ہیلتھ کےئر برانڈ کے مابین دبئی میں معاہدہ طے پاگیا۔یہ معاہدہ پاکستان میں صحت کے میدان میں انقلابی قدم ثابت ہو گا۔ MENA مارکیٹ سمیت سعودی عرب ،دبئی اور مشرقِ وسطٰی میں شعبہ صحت کا معتبر ترین نام بیت البیٹرجی میڈیکل کمپنی سعودی جرمن ہاسپٹل کا بانی ہے۔مذکورہ معاہدہ کی رُو سے بیت البیٹر جی میڈیکل کمپنی بحریہ ٹاؤن کراچی، بحریہ انکلیو اسلام آباد اور بحریہ آرچرڈ لاہور میں بین الاقوامی معیار پر نئے ہاسپٹلز کی تعمیر اور اور موجودہ ہاسپٹلز کی تجدید کرے گا۔مزیدبرآں بیت البیٹر جی میڈیکل کمپنی کا ذیلی ادارہ مڈل ایسٹ ہیلتھ کےئر کمپنی (MEAHCO)مجوزہ سعودی جرمن ہاسپٹل کے ساتھ بحریہ آرچرڈ لاہور میں واقع بحریہ انٹرنیشنل ہاسپٹل کے معاملات کی بھی ذمہ دار ہو گی۔یہ معاہدہ فریقین کے مابین چھ ماہ قبل طے پا جانے والے معاملات کی باضابطہ اور حتمی شکل ہے۔یہ معاہدہ پاکستان میں بین الاقوامی معیار کی ہیلتھ کےئر سہولیات کا آغاز ہے۔چےئرمین بحریہ ٹاؤن ملک ریاض حسین اور پریذیڈنٹ بیت البیٹرجی سوبھی بیٹرجی کا مشترکہ نصب العین ہے کہ علم ا ور وسائل کو استعمال میں لا کرپاکستان کے عوام کو دورِحاضر کی بہترین سہولیات مہیا کر سکیں۔اس موقع پر مسٹر بیٹرجی نے پاکستان میں ہیلتھ کےئر کی معیاری سہولیات کی عوام تک فراہمی یقینی بنانے میں پرائیویٹ سیکٹر کے کِردار کو سراہا۔بحریہ ٹاؤن مشہورِزمانہ ہارلے سٹریٹ لندن کے تعاون سے پاکستان میں بلند پایہSpinal Surgery & Rehabilitation and Nerve Injury Repair Centers کو حتمی شکل دینے میں کوشاں ہے۔ یہ فقیدالمثال اور جدید ہسپتال بحریہ گولف سٹی اسلام آباد، بحریہ انکلیو اسلام آباد اور بحریہ آرچرڈ لاہور میں 80 کروڑ سے زائد کی خطیر لاگت سے تعمیر کیے جا رہے ہیں۔بحریہ ٹاؤن کو احساس ہے کہ پاکستان میں ایسے ہیلتھ کےئر منصوبوں کا قیام عوام کے ساتھ ساتھ ان افراد کے لیے بھی نعمت سے کم نہیں جو علاج کی غرض سے بیرونِ ملک جا کر لاکھوں اور کروڑوں روپے خرچ کرنے پر مجبور ہیں۔

مزید : صفحہ آخر