یوٹیلٹی اسٹورز پر گھی کی فروخت پر پابندی خوش آئند ہے،شکیل بیگ

یوٹیلٹی اسٹورز پر گھی کی فروخت پر پابندی خوش آئند ہے،شکیل بیگ

کراچی (اسٹاف رپورٹر) سپریم کورٹ آف پاکستان کے ایک بینچ نے اہم بنیادی فیصلے جس میں انہوں نے تمام یوٹیلٹی اسٹور پر بکنے والے گھی اور تیل کی فروخت پر پابندی عائد کر دی ہے۔ ہم اس فیصلے کو قابل تحسین سمجھتے ہوئے ان کا شکریہ ادا کرتے ہیں اور سپریم کورٹ سے یہ اپیل بھی کر تے ہیں کہ اسکے علاوہ بھی تمام ڈیپارٹمنٹل اسٹور وں میں بکنے والے گھی اور تیلوں کے بارے میں بھی نظر ثانی کریں ۔کیونکہ اس میں بھی کئی ایسی گمنام کمپنیوں کے تیل اور گھی بھی موجو د ہوتے ہیں۔ جن کا کہیں کوئی وجود نہیں ہوتا ۔ ان خیالات کا اظہار کنزیومر رائٹس پروٹیکشن کونسل آف پاکستان کے چیئر مین شکیل احمد بیگ نے ایک اجلاس کے دوران کیا انہوں نے کہا کہ چیک اینڈ بیلنس نہ ہونے کی وجہ سے یوٹیلٹی اسٹورز میں گزشتہ کئی عرصے سے مضرصحت گھی اور تیل کی فروخت جاری تھی انہوں ن نے کہا کہ ہم معزز جج صاحبان سے یہ بھی مطالبہ کر تے ہیں کہ خدارا تمام ڈیپارٹمنٹل اسٹوروں پر بکنے والے تیل اور گھی کا بھی جائزہ لیں اور اسکے علاوہ تمام علاقوں میں موجود مارکیٹوں میں بکنے والے کھلے عام تیل اور گھی کا بھی جائزہ لیں کیونکہ وہ جن ڈبوں میں ڈال کر فروخت کیا جارہا ہے وہ تو معروف کمپنیوں کے ہیں لیکن اُن میں ڈال کر فروخت کیا جانے والا آئل اور بھی صریحاً مضحر صحت ہے۔انہوں نے مزید کہا کہ ان کنستروں اور بوسیدہ ڈرموں کی حالت تو قابل غور ہے ہی اس میں بکنے والا تیل کن ذرائع سے حاصل کیا جاتا ہے وہ ایک سوالیہ نشان ہے۔ یہ تیل 110سے 120روپے لیٹر خریداجاتا ہے۔ ہم سپریم کورٹ سے مطالبہ کر تے ہیں کہ پاکستان اسٹینڈرڈ کوالٹی کنٹرول اتھارٹیPSQCAکو پابند کرے کہ وہ پورے پاکستان خاص کر کے کراچی میں بکنے والے تمام کھلے تیل اور گھی کا جائزہ لے کیونکہ یہ ایک مجاز اتھارٹی ہے اور یہ اچھا کام بھی کر رہی ہے اور اس کے پاس وسائل بھی موجود ہیں۔ سپریم کورٹ آف پاکستان اس ادارے کو فحال کر دے تو کوئی وجہ نہیں کہ کسی بھی قسم کا مضر صحت تیل اور گھی کراچی کے کسی بھی ڈیپارٹمنٹل اسٹور اور دکانوں پر بک سکے ۔انہوں نے ان مضر صحت تیل اور گھی کی فروخت سے ہیپا ٹائٹس اے بی اور سی کے علاوہ کینسر جیسا مرض بھی لاحق ہوتا ہے جو باعث تشویش ہے۔انہوں نے کہا کہ ہم مطالبہ کرتے ہیں کہ لوگوں کی صحت کے ساتھ کھیلنے والوں کے ساتھ اپنی ہاتھوں سے نمٹا جائے۔

مزید : راولپنڈی صفحہ آخر

لائیو ٹی وی نشریات دیکھنے کے لیے ویب سائٹ پر ”لائیو ٹی وی “ کے آپشن یا یہاں کلک کریں۔


loading...