پاکستان بزنس فورم کا ایمرجنگ مارکیٹ کی نئی رینکنگ پر اظہار مسرت

پاکستان بزنس فورم کا ایمرجنگ مارکیٹ کی نئی رینکنگ پر اظہار مسرت

کراچی(اسٹاف رپورٹر)ایم ایس سی آئی کی جانب سے پاکستان کو ایمرجنگ مارکیٹ کا اسٹیٹس دینے کا فیصلہ کیا گیا ہے جس کا اعلان مئی 2017میں سیمی سالانہ انڈیکس جائزہ میں کیا جائیگا۔ایم ایس سی آئی کے فیصلے کی روشنی میں پاکستان کا اسٹیٹس فرنٹیئر مارکیٹ سے بڑھا کر ایمرجنگ مارکیٹ کردیا جائیگا ۔مصر کے انوسٹمنٹ بینک EFG Hermes کی ایک رپورٹ کے مطابق پاکستان کو ایمرجنگ مارکیٹ کا اسٹیٹس ملنے سے سال2017کے وسط تک پورٹ فولیو سرمایہ کاری میں 475ملین ڈالر کا اضافہ متوقع ہے۔آل پاکستان بزنس فورم کے صدر ابراہیم قریشی نے ایم ایس سی آئی کی جانب سے پاکستان کو ایمرجنگ مارکیٹ کی فہرست میں شامل کرنے پر اظہار مسرت کرتے ہوئے کہا ہے کہ یہ ملک و قوم کیلئے ایک انتہائی مثبت شگون ہے اور فرنٹیئر مارکیٹ سے ایمرجنگ مارکیٹ میں شامل ہونے پر پاکستان کی معاشی ترقی کی رفتار میں اضافہ ہوگا بلکہ ملک میں پورٹ فولیو اور غیر ملکی سرمایہ کاری میں بھی اضافہ ممکن ہوسکے گا۔ابراہیم قریشی کا مزید کہنا تھا کہ گزشتہ چند برسوں سے معاشی و اقتصادی ترقی کی عالمی جہتوں میں منتقلی کا عمل دیکھا جارہا ہے ،آج ابھرتی ہوئی معیشتیں دنیا کی مجموعی آبادی کے85فیصد پر مشتمل ہیں اور مجموعی عالمی پیداوار میں ان کا حصہ60فیصد تک ہے،عالمی کساد بازاری سے قبل ابھرتی ہوئی معیشتیں عالمی ترقی میں80فیصد کردار کی حامل رہی ہیں اور پاکستان کیلئے ایمر جنگ مارکیٹ کی حیثیت سے اب ترقی اور خوشحال ممالک میں شامل ہونے کا یہ انتہائی نادر موقع ہے۔پاکستان کو ایمر جنگ مارکیٹ کی باقاعدہ حیثیت گو کہ آئندہ برس ملے گی،تاہم اس کے مثبت اثرات رواں برس سے ہی دیکھے جاسکیں گے اور پاکستان عالمی سرمایہ کاروں کی توجہ کا مرکز بننا شروع ہوجائیگا،پاکستان اسٹاک مارکیٹ کے بنچ مارک میں رواں برس15فیصد کا اضافہ دیکھا گیا ،پاکستان 1994سے2008تک ایم ایس سی آئی ایمرجنگ مارکیٹ انڈیکس کا حصہ تھا،تاہم سال2008میں اسٹاک مارکیٹ کے بحران کے بعد مارکیٹ کی عارضی بند ش کے بعد پاکستان سے یہ اسٹیٹس واپس لے لیا گیا تھا اور دوبارہ مئی2009میں پاکستان کو فرنٹیئر مارکیٹ کی فہرست میں شامل کرلیا گیا تھا۔

مزید : راولپنڈی صفحہ آخر

لائیو ٹی وی نشریات دیکھنے کے لیے ویب سائٹ پر ”لائیو ٹی وی “ کے آپشن یا یہاں کلک کریں۔


loading...