ٹرمپ انتظامیہ کا بھارت کو اپنا حقیقی دوست قرار دینا واضح کرتا ہے کہ امریکہ بھارت کو خطہ کا تھانیدار بنانا چاہتا ہے:سینیٹر ساجد میر

ٹرمپ انتظامیہ کا بھارت کو اپنا حقیقی دوست قرار دینا واضح کرتا ہے کہ امریکہ ...

سیالکوٹ(ڈیلی پاکستان آن لائن)مرکزی جمعیت اہل حدیث  کے سربراہ  سینیٹر پروفیسر ساجد میر نے کہا ہے کہ ٹرمپ انتظامیہ کا بھارت کو اپنا حقیقی دوست قرار دینا واضح کرتا ہے کہ امریکہ بھارت کو خطہ کا تھانیدار بنانا چاہتا ہے، دہشت گردی کی جنگ میں فرنٹ لائن اتحادی ہونے کے باوجود امریکہ کا پاکستان پر اعتماد نہ کرنا اور عرب امارات کا ہمارے مقابلہ میں بھارت کو ترجیح دینا ہمارے لئے لمحہ فکریہ ہے۔

سینیٹر ساجد میر کا  کہنا تھاامریکہ اقوام عالم میں پاکستان کو تنہا کرنے کی راہ پر چل پڑا ہے،امریکی صدر کے دھمکی آمیز لہجے سے پوری دنیا میں تشویش کی لہر دوڑ چکی ہے، سمندر پار حراستی مراکز میں تشدد کی اجازت دینے کا حکم نامہ خطرناک ہے، ٹرمپ کو جنگجو بننے کی بجائے مکالمے کی بات کرنی چاہیے، ہماری قومی خارجہ پالیسی ملکی سلامتی اور قومی مفادات کے تقاضوں سے ہم آہنگ ہونی چاہیے۔انہوں نے کہا کہ عرب ممالک ابھی تک سعودی عرب کو لاحق خطرات اوریمن کی جنگ میں پاکستان کی پالیسی پر خوش نہیں ہیں،اگرچہ پاکستان اور اسکی فوج نے حرمین شریفین کے تحفظ کے لیے اپنے بھرپور ساتھ دینے کا اعادہ کیا ہے مگر پارلیمنٹ کی قرارداد انہیں ابھی تک نہیں بھولی اور عرب امارات کو بھی اس چیز کا دکھ ہے۔انہوں نے کہا کہ ایک طرف پاکستان کو عالمی سطح پر تنہا کرنے کی سازش ہو رہی ہے اور دوسری طرف داخلی معاملات میں الجھے ہوئے ہیں، گزشتہ روز جو کچھ پارلیمنٹ میں ہوا نہایت شرمناک ہے، سیاستدانوں کی یہی باہمی لڑائیاں غیر جمہوری قوتوں کو مضبوط کرتی ہیں۔

سینیٹر ساجد میر نے کہا کہ مجھے حیرانگی اس بات پر ہے پانامہ لیکس کے معاملے پر سپریم کورٹ کے فیصلے کا انتظار کیوں نہیں کیا جارہا ؟ اس سے پہلے اپنی عدالتیں لگا کر دوسروں کو چور اور ڈاکو قراردینا کہاں کی اخلاقیات ہے؟ پانامہ کیس میں بہت جلد دودھ کا دودھ اور پانی کا پانی ہو جائے گا ، مگر اس معاملے کو ضرورت سے زیادہ اچھال کر بدتمیزی اور بدتہذیبی کی جو مثالیں قائم کی جارہی ہیں، ہم اپنی آنے والی نسلوں کے لیے کیا چھوڑ کے جارہے ہیں؟۔ 

مزید : سیالکوٹ

لائیو ٹی وی نشریات دیکھنے کے لیے ویب سائٹ پر ”لائیو ٹی وی “ کے آپشن یا یہاں کلک کریں۔


loading...