شہباز شریف بد زبانی سے باز نہ آئے تو ان کے پروڈکشن آرڈر منسوخ ہونے چاہئیں: نعیم الحق 

شہباز شریف بد زبانی سے باز نہ آئے تو ان کے پروڈکشن آرڈر منسوخ ہونے چاہئیں: ...
شہباز شریف بد زبانی سے باز نہ آئے تو ان کے پروڈکشن آرڈر منسوخ ہونے چاہئیں: نعیم الحق 

  

اسلام آباد (ڈیلی پاکستان آن لائن) وزیراعظم کے معاون خصوصی نعیم الحق نے کہا ہے کہ اگر شہباز شریف بد زبانی سے باز نہیں آئے تو ان کے پروڈکشن آرڈر منسوخ ہونے چاہئیں۔ اسمبلی کا ماحول دیکھ کر سخت غصہ آتا ہے اپوزیشن فیصلہ کر چکی ہے کہ ایوان کو چلنے نہیں دینا شاہد خاقان عباسی کی سیاست ختم ہوچکی انہوں نے اپنے طیارے میں اسحاق ڈار کو بیرون ملک فرار کرایا ان کے خلاف کارروائی ہونی چاہئے ۔

نجی ٹی وی سے گفتگو کرتے ہوئے نعیم الحق نے کہا کہ اسمبلی کا ماحول دیکھ کر غصہ آتا ہے اور افسوس بھی ہوتا ہے ،ایک زیر تفتیش ملزم پروڈکشن آرڈر کے نام پر اسمبلی میں آ کر دوسروں کو گالیاں دیتا ہے پروڈکشن آرڈر کے کچھ اصول ہوتے ہیں اگر شہباز شریف باز نہ آئے تو ان کے پروڈکشن آرڈر ختم ہونے چاہئیں۔ انہوں نے کہا کہ ہم ذاتیات پر حملے نہ کرنے کی یقین دہانی کروانے کو تیار ہیں پارلیمنٹ کے اندر ذاتیات پر حملے کرنی کی کسی کو اجازت نہیں ہونی چاہئے شہباز شریف نے عمران خان کو سلیکٹڈ وزیراعظم کہا شہباز شریف کی تقریر کے دوران ہماری طرف سے جملے بازی نہیں کی گئی جبکہ اسد عمر کے فنانس بل پیش کرنے کے دوران مسلم لیگ ن کے لوگوں نے نعرے لگائے جس کے باعث ایوان کا ماحول خراب ہوا انہوں نے کہا کہ شہبا زشریف کو پبلک اکاؤنٹس کمیٹی کا چےئر مین بنانے پر ہماری جماعت کے تحفظات تھے لیکن ایوان کی کارروائی چلانے کے لئے ہم نے اپنی قیادت کا فیصلہ تسلم کیا۔ نعیم الحق نے کہا کہ شاہد خاقان عباسی کی اپنے حلقے کی سیاست ختم ہو چکی ہے انہوں نے بطور وزیراعظم اپنے طیارے میں اسحاق ڈار کو بیرون ملک فرار کرایا اس پر ان کے خلاف کارروائی ہونی چاہئے۔

مزید : قومی