مالی امداد کا حصول ، سرکاری افسروں کی بیوائیں مشکلات سے دوچار

مالی امداد کا حصول ، سرکاری افسروں کی بیوائیں مشکلات سے دوچار

لاہور(جاوید اقبال) حکومت نے جاں بحق افسران کی بیواؤں کیلئے مالی امداد کی ادائیگی میں آسانی کی بجائے نئی مشکلات کھڑیں کردیں۔ آفیسر کی بیوہ کو امداد کے اجرا کیلئے سروس بک سے لے کربچوں کے بیان حلفی تک تمام دستاویزات جمع کرانا لازمی قرار، نئے حکم نامے کا مراسلہ تمام صوبائی محکموں کو جاری کردیاگیا ہے ۔اس مراسلے کے مطابق آفیسر کی بیوہ کو مالی امداد کیلئے دس نکات پر مبنی دستاویزات فراہم کرنا لازم ہوں گی ۔ دس نکات پر مبنی دستاویزات فراہم نہ کرنے پر بیوہ اور بچوں کی مالی امداد نہیں کی جائے گی۔ دستاویزات میں مرنے والے آفیسر کی بیوہ کو مرحوم کا برتھ سرٹیفکیٹ ، ڈیتھ سرٹیفکیٹ ، بچوں کی تفصیل، بچوں کے بیان حلفی، مرحوم کی سروس بک، آخری تنخواہ کی سلپ اور دیگر دستاویزات جمع کرانا ہوں گی۔اعلیٰ حکام کے مطابق مذکورہ دستاویزات محکمے کو جمع کرانے پر ایک سال کا وقت درکار ہوتا ہے جس کے لیے ایک سال تک بیوہ اپنے مرحوم خاوند کی دستاویزات پر کلیئر نس کے لیے دربدر ہوتی رہے گی۔

مالی امداد /مشکلات

مزید : صفحہ اول