شارجہ، شیر خوار بچے کی فروخت کا الزام، والدین گرفتار

شارجہ، شیر خوار بچے کی فروخت کا الزام، والدین گرفتار

شارجہ(آئی این پی) پولیس نے شیر خوار بچے کو فروخت کرنے والے والدہ کو انسانی اسمگلنگ کے الزام میں گرفتار کرلیا۔ہفتہ کو بین الاقوامی خبر رساں ادارے کے مطابق متحدہ عرب امارات کی ریاست شارجہ کی پولیس نے خفیہ اطلاعات پر کنگ فیصل روڈ کے قریب کارروائی کرتے ہوئے 500 درہم کے عوض شیر خوار بچہ فروخت کرنے والی خاتون کو حراست میں لے لیا۔اماراتی خبر رساں ادارے کا کہنا ہے کہ پولیس نے خاتون سمیت تین افراد انسانی اسمگلنگ کے الزام میں گرفتار کیا ہے۔میڈیا ذرائع کا کہنا ہے کہ انڈونیشیا سے تعلق رکھنے والی خاتون خراب مالی حالات کے باعث گزشتہ ایک برس سے فلیٹ کا کرایہ ادا نہیں کرپائی تھی، جس کے باعث اس نے اپنے شیر خوار بچے کو فروخت کردیا۔فروخت ہونے والے کم سن بچے کے والد نے بتایا کہ شارجہ میں موجود انڈونیشین خاتون ہمارے بچے کو 500 درہم میں خریدنے کیلیے راضی ہوئی تھی۔بچے کے والد نے بتایا کہ کنگ فیصل روڈ کے قریب واقع رہائشی فلیٹ میں بچے کو خاتون کے حوالے کیا تھا۔

مزید : علاقائی