ٹیکس کا نظام درست ہونیکی ضرورت ہے‘ پاکستان ٹیکس فورم

ٹیکس کا نظام درست ہونیکی ضرورت ہے‘ پاکستان ٹیکس فورم

  



لاہور(یواین پی) کرپشن کی کی شکایات پر فوری کارروائی کیلئے تمام اداروں میں خصوصی کاؤنٹر زقائم کئے جائیں،چیئرمین فیڈرل بورڈ آف ریو نیو کا ٹیکس سسٹم کی تباہی کی جانب گامزن ہونے کا بیان لمحہ فکریہ ہے، حکومت کے اپنے ادارے ٹیکس آمدن میں اضافے کی راہ میں خود سب سے بڑی رکاوٹ ہیں،ٹیکس بارز حکومت کو جامع پالیسی کی تیاری کیلئے معاونت دینے کے لئے ہر وقت تیار ہیں۔ان خیالات کا اظہار پاکستان ٹیکس فورم کے چیئرمین ذوالفقار خان نے ٹیکس نظام کے حوالے سے منعقدہ مذاکرے میں خطاب کرتے ہوئے کیا۔ اس موقع پر سوال و جواب کا سیشن بھی ہوا۔ ذوالفقار خان نے کہا کہ ٹرانسپرنسی انٹر نیشنل کی رپورٹ سے عوام میں مایوسی کی لہر دوڑ گئی ہے جبکہ ٹیکس دہندگان اور سرمایہ کاروں میں تشویش پھیلی ہے، اگر یہ رپورٹ حقائق کے برعکس ہے تو حکومت کو اس کا فی الفور نوٹس لے کر کارروائی کرنی چاہیے۔انہوں نے کہا کہ دیگر تنظیموں کے ساتھ مل کر ٹیکس آگاہی مہم شروع کر رکھی ہے جس کا مقصد ٹیکس دینے کی استطاعات رکھنے والوں کو ٹیکس دینے کیلئے راغب کرنا ہے اور اس کے ساتھ ساتھ حکومت کے ٹیکسیشن کے نظام میں پائے جانے والے سقم کی نشاندہی بھی کی جاتی ہے۔ انہوں نے کہا کہ چیئرمین فیڈرل بورڈ ریو نیو کا بیان کہ ٹیکس سسٹم تباہی کی جانب گامزن ہے لمحہ فکریہ ہے، جب تک ٹیکس کانظام درست نہیں ہوگا ہماری معیشت ایسے ہی سسکتی رہے گی اور ہم ہر تین سے پانچ سال بعد عالمی مالیاتی اداروں کے در پر کشکول اٹھائے کھڑے ہوں گے۔حکومت قرضوں اور سود سے بچنے کیلئے ہنگامی بنیادوں پر اقدامات کرے، نظام پر عوام کا اعتماد بحال کیا جائے۔

تاکہ انہیں یقین ہو سکے کہ ان کا دیا ہوا ٹیکس کا پیسہ غلط جگہ پر خرچ نہیں ہوگا۔

مزید : کامرس