ٹیکسٹائل کی برآمدات کو 28 ارب ڈالر تک پہنچایاجاسکتاہے، پراسیسنگ ملز ایسوسی ایشن

ٹیکسٹائل کی برآمدات کو 28 ارب ڈالر تک پہنچایاجاسکتاہے، پراسیسنگ ملز ایسوسی ...

  



فیصل آباد(اے پی پی) آل پاکستان ٹیکسٹائل پراسیسنگ ملز ایسوسی ایشن کے ترجمان نے کہا کہ اگر ٹیکسٹائل چین کے مسائل حل کردیئے جائیں تو ٹیکسٹائل کی برآمدات کو 27 سے 28 ارب ڈالر تک پہنچایاجاسکتاہے تاہم اس وقت بجلی و گیس کے بحران سے کئی ادارے بند جبکہ باقی چند کم سے کم استعداد کار پر چلنے سے شدید مشکلات کاسامنا کرناپڑرہاہے۔ انہوں نے کہاکہ ٹیکسٹائل کی اہمیت اور افادیت کے ادراک کے باوجود اس کی بجلی و گیس کی ضروریات کو پورا نہیں کیا جا رہا۔

اور اسی وجہ سے کئی ادارے بند جبکہ کئی کم استعداد کا ر پر چلائے جا رہے ہیں جو قومی نقصان ہے۔ انہوں نے کہا کہ اگر ٹیکسٹائل کی پوری چین کے مسائل کو حل کیا جائے تو ٹیکسٹائل کی برآمدات سے 27 سے 28ارب ڈالر تک کمائے جا سکتے ہیں۔ انہوں نے بیماریونٹوں کی بحالی کے بارے میں وضاحت کی کہ کوئی ادارہ قرضے معاف کرانا نہیں چاہتا مگروہ چاہتے ہیں کہ سٹیٹ بینک نان پرفارمنگ لون کے بارے میں اپنے قوانین میں نرمی کرے تا کہ بنکوں سے ہم نئے لون لے کر بند یونٹوں کو چلا سکیں۔انہوں نے کہاکہ اس طرح جہاں صنعتیں چلیں گی وہیں جی ایس پی پلس کی سہولت سے بھی پوری طرح فائدہ اٹھایا جا سکے گا۔انہوں نے کہا کہ اگر یہ مسئلہ حل ہو جائے توبیمار یونٹوں سے 1 ملین ڈالر کمانے کے علاوہ 80 سے 1 لاکھ تک مزدورں کو روزگاربھی مہیا کیا جا سکے گا۔

مزید : کامرس