بھارت جمہوری ملک نہ سیکولر، نام جمہوریت کا پول دنیا پر واضح ہو چکا،سردار مسعود فاروق حیدر

بھارت جمہوری ملک نہ سیکولر، نام جمہوریت کا پول دنیا پر واضح ہو چکا،سردار ...

  



مظفرآباد (نیوزایجنسیاں)آزاد جموں و کشمیر کے صدر سردار مسعود خان نے کہا ہے کہ بھارت کی جمہوریت کا پول دنیا پر کھل چکا ہے وہ جمہوری ملک اور نہ ہی سیکولرازم پر یقین رکھتا ہے کیونکہ جہاں اقلیتوں اور غیر ہندووں کو زندہ رہنے کے حق سے بھی محروم کیا جا رہا ہے۔ بھارت کے یوم جمہوریہ کے موقع پر مختلف ذرائع ابلاغ پر نشر ہونے والے اپنے ایک پیغام میں صدر آزاد کشمیر نے کہا کہ آج بھارت یوم جمہوریہ منا رہا ہے لیکن اہل جموں وکشمیر، پاکستان اور دنیا بھرمیں آزادی کے علمبردار اس دن کو یوم سیاہ کے طور پر منا رہے ہیں۔ یہ یوم سیاہ صرف جموں کشمیر اور پاکستان میں نہیں بلکہ آج پوری دنیا میں بین الاقوامی سطح پر سینکڑوں شہروں میں بھارتی حکومت، حکمران جماعت بھارتیہ جنتا پارٹی اور اس کی اتحادی راشٹریا سوائم سیوک سنگھ کے ظالمانہ اور سفاکانہ چہرے کو بے نقاب کرنے کیلئے منایا جا رہا ہے۔ انہوں نے کہا کہ موجودہ دور کا سب سے بڑا المیہ یہ ہے کہ بھارت نے 15اگست 1947کے دن آزادی حاصل کی، اور ٹھیک 73دن کے بعد اس نے جموں وکشمیر کے ایک حصے پر زبردستی فوجی قبضہ کرکے اسے نو آبادی میں تبدیل کر دیا۔دوسری طرف وزیر اعظم آزادجموں وکشمیر راجہ محمدفاروق حیدر خان نے کہا ہے کہ بھارت کا یوم جمہوریہ ہمارے لیے یوم سیاہ ہے۔بھارت نے کشمیر پر غاصبانہ قبضہ کر رکھا ہے۔70سال سے بھارت مقبوضہ کشمیر میں غیر جمہوری طریقہ کار اپنائے ہوئے ہے۔,۔ہندوستان کی جمہوریت کا اصلی چہرہ مقبوضہ کشمیر میں نظر آ رہا ہے۔مقبوضہ کشمیر میں رائج کالے قوانین صریحاً جمہوری اقدار کیخلاف ہیں۔ہندوستان بتائے کہ 5اگست کے بعد مقبوضہ کشمیر میں جو ہوا کیا وہ جمہوری ملک کرتا ہے۔ وزیر اعظم نے ان خیالات کا اظہاریوم سیاہ کے حوالے سے نجی ٹی وی سے گفتگو کرتے ہوئے کیا۔ انہوں نے کہا کہ ہندوستان نے اقوام متحدہ کی قراردادوں کی خلاف ورزی کی،مسئلہ کشمیر کے بنیادی فریق کشمیری عوام ہیں۔

سردار مسعود،فاروق حیدر

مزید : صفحہ آخر