افغان صوبے بلخ میں بمباری، 16جنگجو ہلاک

افغان صوبے بلخ میں بمباری، 16جنگجو ہلاک

  



مزارشریف(شِنہوا)شمالی افغانستان کے صوبے بلخ میں طالبان جنگجوں کے خفیہ ٹھکانو ں پر جنگی طیاروں کی بمباری میں کم از کم 16 جنگجو مارے گئے ہیں، افغان فوج کے شمالی علاقوں کے ترجمان محمد حنیف رضائی نے اتوار کو بتایا بلخ صوبے میں جنگجوں کے ٹھکانوں کو لڑاکا طیاروں کے زریعے نشانہ بنایا گیا۔ عہدیدار نے دعوی کیا کہ شورش زدہ صوبے بلخ کے کچھ علاقوں میں ہفتے کی شام فضائی حملوں کے زریعے طالبان کے محفوط ٹھکانوں پر بمباری کی گئی جس میں 16 مسلح جنگجوں کو ہلاک کیا گیا ہے۔حکام کے مطابق سیکورٹی فورسز نے بلخ صوبے میں کلین آپ آپریشن کے دوران، جس میں انہیں جنگی طیاروں کی مدد بھی حاصل تھی، گزشتہ کئی روز کے دوران کئی دیہات سے جمگجوں کا صفایا کردیا ہے۔طالبان نے ان خبروں کے حوالے سے تا حال کوئی تبصرہ نہیں کیا۔

صوبہ بلخ جس کا دارالحکومت مزارشریف ہے، کابل کے شمال میں 305کلومیٹر کی دوری پر واقع ہے اور یہ صوبہ گزشتہ کئی سالوں سے طالبان زیر قیادت شورش کا مرکز بنا ہوا ہے۔دوسری جانب مغربی صوبے خوست میں ایک شادی کی تقریب پر دستی بم کے حملے میں کم از کم 20 افراد زخمی ہوئے ہیں، پولیس نے اتوار کے روز بتایا کہ زخمی ہونے والے افراد میں خواتین اور بچے بھی شامل ہیں۔

مزید : علاقائی