کرپشن رپورٹ‘ سلیکٹڈ حکومت کو مستعفی ہوجانا چاہیے‘ ملک احمد یار ہنجرا

کرپشن رپورٹ‘ سلیکٹڈ حکومت کو مستعفی ہوجانا چاہیے‘ ملک احمد یار ہنجرا

  



کوٹ ادو(تحصیل رپورٹر)سابق صوبائی وزیر جیل خانہ جات ملک احمد یار ہنجراء نے کہا ہے کہ ٹرانسپیرنسی انٹرنیشنل کی رپورٹ نے تبدیلی سرکار کا چہرہ عوام کے سامنے عیاں کردیا ہے، کرپشن کے خاتمے کے اعلان پر حکومت میں آنے(بقیہ نمبر27صفحہ12پر)

والی تبدیلی سرکار پر اجتماعی کرپشن کر رہی ہے،اتنی بڑی کرپشن پر احتسابی اداروں کی خاموشی معنی خیز ہے،نیا پاکستان بنانے والوں سے عوام دن بدن بد ظن ہورہے ہیں، حکومت اخلاقی جواز کھو چکی ہے،رپورٹ پر سلیکٹیڈ حکومت کومستعفی ہو جانا چاہیے،ان خیالات کااظہار انہوں نے ہنجراء ہاؤس پر میڈیا کے نمائندوں سے بات چیت کرتے ہوئے کیا،انہوں نے کہا کہ تبدیلی سرکار نے کرپشن کے خلاف نعروں پر لوگوں کو ورغلایا،سیاسی رہنماؤں کو بدنام کیا،لیکن جب حقیقت کھل گئی تو خود اجتماعی کرپشن میں ملوث نکلی،ٹرانسپیرنسی انٹرنیشنل کی رپورٹ نے تبدیلی سرکار کا چہرہ عوام کے سامنے عیاں کردیا ہے،کرپشن کے خاتمے کے اعلان پر حکومت میں آنے والی تبدیلی سرکار تھوک کی بنیاد پر اجتماعی کرپشن کر رہی ہے، لیکن بد قسمتی سے احتسابی اداروں نے بھی چپ سادھ لی ہے،انہوں نے کہا ہے کہ اب روزانہ کی بنیاد پر تبدیلی سرکار کی کرپشن کی داستانیں میڈیا کی زینت بن رہی ہیں،عوام اور ان کے اپنے ممبران کھلے عام محفلوں میں اپنی حکومت کی کرپشن کے قصے سنارہے ہیں،ملک احمدیار نے کہا کہ تمام احتسابی اداروں کی نظریں صرف اپوزیشن کے علاوہ کسی حکومتی رکن یا وزیر کی کرپشن کی جانب نہیں جارہی، جس پر تیزی کی ساتھ حکمران جماعت کی مقبولیت گری ہے،انہوں نے کہا ہے کہ الزامات لگانے والوں کو اب اپنی کرپشن نظر نہیں آرہی اور نہ ہی احتسابی ادارے ان کے خلاف کوئی اقدامات اٹھارہے ہیں،تبدیلی سرکار کی ناقص پالیسیوں کی وجہ سے عوام کا جینا حرام کردیا ہے، مہنگائی اور بے روزگاری نے عوام کو ذہنی مریض بنادیا ہے،عوام کی قوت خرید جواب دے گئی ہے،انہوں نے کہا کہ ٹارگٹ کلنگ، بھتہ خوری اور دن دیہاڑے ڈکیتیاں معمول بن گئی ہیں، نااہل اور نالائق حکومت نے عوام کا جینا محال کردیا ہے لیکن حکمران جماعت اور انکے سرمایہ دار ہمنوا دونوں ہاتھوں سے حکومتی تعاون سے وسائل لوٹ رہے ہیں،ملک احمد یار ہنجراء نے مزید کہاکہ تبدیلی سرکار اور اس کی رعایا کی پانچوں انگلیاں گھی میں پڑی ہیں

احمد یار ہنجرا

مزید : ملتان صفحہ آخر