مختلف شہروں میں حادثے‘ طالبعلم سمیت 4افراد جاں بحق

مختلف شہروں میں حادثے‘ طالبعلم سمیت 4افراد جاں بحق

  



خانیوال‘ رحیم یار خان‘ شادن لُنڈ‘ قصبہ کالا‘ دائرہ دین پناہ (نمائندہ پاکستان‘ نامہ نگار) تونسہ انڈس ہائی وے پر کوچ نے موٹر سائیکل سوار کو کچل دیا بستی سبزانی کا رہائشی بلال ولد احمد بخش سبزانی موٹرسائیکل پر تونسہ جا رہا تھا کہ مسافر کوچ نے اسے کچل دیا جو موقعہ پر جانبحق ہو گیا کوچ ڈرائیور جائے حادثہ سے فرار ہو گیا جبکہ مقامی پولیس نے کوچ قبضہ میں لے کر قانونی کاروائی شروع کر دی حادثہ تیز رفتاری کے باعث پیش آیا۔ ٹریفک حادثہ میں شدید زخمی ہونیوالا 20سالہ نوجوان ہسپتال میں دم توڑگیا۔ واہی شاہ محمد کا(بقیہ نمبر16صفحہ12پر)

رہائشی20سالہ مجید احمد موٹر سائیکل پرسوار ہوکر کام کے سلسلہ میں جارہاتھاکہ تیز رفتاری کے باعث سامنے سے آنیوالی مسافر وین سے جاٹکرایا جس کے نتیجہ میں وہ شدید زخمی ہوگیا۔ورثاء نے طبی امداد کیلئے شیخ زید ہسپتال منتقل کیا جہاں طبی امداد کے باوجود مجید احمد جانبرنہ ہوپایااور دم توڑگیا۔ نواحی موضع جنون کچہ کا 16 سالہ محمد ابراہیم و لد محمد موسیٰ رڈجو آٹھویں کلاس کا طالبعلم بھی تھاصبح کو قریبی مسجد میں جھاڑو دے رہا تھا کہ پانی کی موٹر کی ننگی تار سے اس کو بجلی کا کرنٹ لگاساتھیوں نے برقی رو بند کرکے الگ گیا اور فوری طور پرہسپتال لے جاتے ہوئے راستے میں جاں بحق ہو گیا۔ نہ سراے سدھو کی حدود پل مانگاں والی کے قریب تیزرفتار موٹرسائیکل سوار محمد حیات درخت سے ٹکرانے سے موقع پرجابحق تھانہ سراے سدھو کی حدود پل مانگاں والی کے قریب موضع اولکھ سندھو کا رہایشی 22 سالہ محمد حیات ولد بشیر قوم تھراج اپنی سی ڈی موٹرسائیکل نمبرMNK 5610 پر ملتان سے واپس اپنے گھر اولکھ سندھو آرہاتھا کہ راستے میں تیزرفتاری کے باعث موٹرسائیکل قابو نہ ہونے کی صورت میں پل مانگاں والی کے قریب سڑک کے کنارے درخت سے جا ٹکریا شدید زخمی ہوگیا جہاں وہ زخموں کی تاب نہ لاتے ہوئے موقع پر جاں بحق ہوگیا پولیس سرائے سدھو نے مرحوم محمد حیات کی ڈیڈباڈی طویل میں لیکر ورثہ کے حوالے کردی مرحوم محمد حیات اپنے 3 بچوں کا باپ تھا جوآج اپنے خالق حقیقی کو جاملا۔

جاں بحق

مزید : ملتان صفحہ آخر