سرائے نورنگ،ایم پی اے منور خان کی کوششیں بارآور،کشیدگی ختم

سرائے نورنگ،ایم پی اے منور خان کی کوششیں بارآور،کشیدگی ختم

  

سرائے نورنگ(نمائندہ پاکستان )جے یوآئی کے رکن صوبائی اسمبلی حاجی منور خان ایڈوکیٹ اور انجنیئر حاجی امیر نواز خان کی کوششوں سے ضلعی انتظامیہ اور ڈاکٹروں کے مابین کشیدگی ختم ہوگئی۔ڈاکٹروں کے خلاف درج  ایف آئی آر  سمیت انکوائری کمیٹی ختم کردی گئی جس کے بعد ڈاکٹروں  نے ہڑتال کردی۔پیرامیڈیکس ایسوسی ایشن لکی مروت کے ضلعی صدر طارق سردار خان نے بتایاکہ پچھلے ہفتے لکی سٹی میں جیل سے رہائی پانے والے افراد پر فائرنگ کے نتیجے میں دو راہگیر زخمی ہوئے جنہیں طبی امداد دینے کے لئے سٹی ہسپتال پہنچایا گیا تاہم وہاں دونوں زخمی جاں بحق ہوگئے جس پر عوام نے بھی شدید احتجاج کیا بعدازاں ڈپٹی کمشنر لکی مروت عبدالحسیب خان نے فوری طورپر ڈاکٹروں کے خلاف رپورٹ درج کرکے انکوائری کمیٹی تشکیل دے دی  جس پر ڈاکٹروں اور پیرامیڈیکس ایسوسی ایشن لکی مروت نے ایمرجنسی کے سواء ہسپتالوں کے اوپی ڈیز اور نجی کلینکوں کا بائیکاٹ کااعلان کیا جو تین دن تک جاری رہی۔گزشتہ روز جے یو آئی کے رکن صوبائی اسمبلی حاجی منور خان ایڈوکیٹ اور انجنیئر حاجی امیرنوازخان کی کوششوں سے ضلعی انتظامیہ اور ڈاکٹروں کے مابین کشیدگی کاخاتمہ ہوگیا ڈپٹی کمشنر لکی مروت عبدالحسیب خان نے ڈاکٹروں کے خلاف ایف آئی آر سمیت  انکوائری کمیٹی ختم کردی جب کہ ڈاکٹروں اور پیرامیڈیکس ایسوسی ایشن لکی مروت نے بھی اپنی ہڑتال ختم کرنے کااعلان کیا اور کل سے اپنی ڈیوٹیوں میں جانے کااعلان کیا۔صدر طارق سردار خان نے ایم پی اے حاجی منور خان ایڈوکیٹ کا شکریہ ادا کرتے ہوئے کہاہے کہ منور خان ایڈوکیٹ نے عوامی نمائندہ ہونے کا حق ادا کر دیا دریں اثناء عوامی حلقوں نے ضلعی انتظامیہ اور ڈاکٹروں کے مابین کشیدگی خاتمے پر اطمینان کااظہار کرتے ہوئے ایک احسن اقدام قراردیا۔

مزید :

پشاورصفحہ آخر -