چار ٹر آف ڈیمانڈ منوا کر دم لیں گے، کلر کس ایسوسی ایشن، مختلف شہروں میں مظاہرے، دھرنے، سرکاری امور دہم برہم 

      چار ٹر آف ڈیمانڈ منوا کر دم لیں گے، کلر کس ایسوسی ایشن، مختلف شہروں میں ...

  

 ملتان‘ بہاولپور‘ ڈیرہ‘ مظفر گڑھ‘ خانیوال (خصوصی رپورٹر‘ ڈسٹرکٹ رپورٹر‘ سٹی رپورٹر‘ نامہ نگار‘ نیوز رپورٹر‘ بیورو نیوز) آل پاکستان کلرکس ایسوسی ایشن ملتان‘ بہاولپورکی جانب سے ہزاروں ملازمین نے مہنگائی کیخلاف،پنشن گریجوائٹی کے تحفظ کیلئے پٹرول،گیس،بجلی کے نرخوں میں آئے روز اضافے کیخلاف شدید احتجاج کرتے ہوئے کمشنر آفس کے سامنے دھرنا دیا۔احتجاجی دھرنا سے مرکزی رابطہ سیکرٹری رؤف الرحمن،(بقیہ نمبر19صفحہ 6پر)

چیئر مین پنجاب رانا وحید سلطان،جنرل سیکرٹری پنجاب فخرالرحمن اظہر نے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ وزیر اعظم عمران خان کو ان کے کیے ہوئے وعدے دلاتے ہیں کہ آج لاکھوں خاندان سراپا احتجاج ہیں کوئی طبقہ ایسا نہیں جو پریشان نہ ہو 9 فروری تک اگر مطالبات پورے نہ ہوئے تو لاکھوں ملازمین تامرگ پارلیمنٹ ہاؤس کے سامنے احتجاجی دھرنا دینے پر مجبور ہونگے۔پہلے مرحلے میں 2 فروری کو ڈویژنل صدر اور زونل سیکرٹریٹ بی ڈبلیو ڈی ورکرز یونین ہائی وے محکمہ سے کمشنر آفس تک احتجاج کیا جائیگا اور 10 فروری کو پورے ملک کے ملازمین اسلام آباد کی طرف مارچ کرینگے۔احتجاجی دھرنا سے صدر پنجاب ٹیچرز یونین جام صادق جھلن،زونل سیکرٹری پی ڈبلیو ڈی چوہدری افضل محمود،چیئر مین اپیکا ملک اشرف اعوان،جنرل سیکرٹری محمدعبداللہ،رفیق احمد خان،چوہدری بشارت علی چیمہ،محمد اشرف بھٹی،نے بھی خطاب کیا ہے۔ مہنگائی نے غر یب سرکاری ملازمین کا جینا دوبھر کر دیا آل پاکستان کلرکس ایسوسی ایشن کے چارٹر آف ڈیمانڈ کو منوا کر دم لیں گے۔ان خیالات کااظہار بمبئے ہوٹل چوک پر متحدہ آل پاکستان کلرکس ایسوسی ایشن کے را ہنماؤں سرفراز اللہ والا،سرفراز احمد خان،حاجی عبدالغفور دستی،یوسف خان ترین،منیر خان لغاری،عبدالحمید جیالا نے مہنگائی کے خلاف نکالی گئی احتجاجی ریلی سے خطاب کرتے ہوئے کیا احتجاجی ریلی میں حکومت کے خلاف شدید نعرہ بازی۔ احتجاجی ریلی سے خطاب کرتے ہوئے مقر ین نے کہا کہ حکومت 60 فیصد ایڈہاک ریلیف الاؤنس بنیادی تنخواہ میں شامل کر کے سکیل ریوائز کیے جائیں ہاؤس رینٹ الاؤنس کو سکیل کے مطابق دیا جائے ٹکنیکل اسٹاف کی اپ گریڈ یشن کی جائے یوٹیلیٹی الاؤنس صوبہ پنجاب کے تمام ملازمین کو دیا جائے کنٹریکٹ،ایڈہاک،ورک چارج ملازمین کو مستقل کیا جائے ایم آر بلڈنگ کے ورک چارج ملازمین کی چھے ماہ سے رکی ہوئی تنخواہ ادا کی جائے اسد عمر کی پیش کردہ قرارداد کے مطابق ہاؤس رینٹ کے پانچ فیصد کی کٹوتی ختم کی جائے۔مہنگائی کی وجہ سے جملہ سرکاری ملازمین انتہائی کرب میں مبتلا ہیں ادویات،گوشت،پھل،سبزی،پٹرول،تعلیم،صحت،بجلی کے بل ان کی دسترس سے باہر ہو چکے ہیں صبر کا پیمانہ لبریز ہوتا جا رہا ہے حکومت ان کی تنخواہیں فوری ادا کرے لیڈی ہیلتھ ورکرز کے سروس سٹرکچر سمیت دیگر مطالبات منظور کیے جائیں حکومت سرکاری ملازمین کے مسائل پرتوجہ دے بصورت دیگر احتجاجی تحریک کا دائرہ وسیع کر دیا جائے گا آل پاکستان کلرکس ایسوسی ایشن کے چارٹر آف ڈیمانڈ کی منظوری تنخواہوں و پنشن میں اضافے تک احتجاجی تحریک جاری رکھی جائے گی ا حتجاجی ریلی میں فیق سہرانی،خالد محمود،شیخ جہانگیر،خیر بخش لغاری،دانیال،ظفر جہور،امین،میاں یاسر،منصور بھٹی،غلام اکبر،مقصود خان جلبانی سمیت سرکاری ملازمین نے بڑ ی تعداد میں شرکت کی۔ مظفر گڑھ میں ایپکا کی طرف سے مطالبات کی منظوری کیلئے آحتجاج کیا گیا ضلع بھر کے تمام دفاتر  بند رھے جس کی وجہ سے سرکاری امور مکمل طور ہر ٹھپ رھے اور دور دراز سے  آئے سائلین سارا، دن خوار ھوتے رھے ضلعی صدر ایپکا وزیر احمد دستی فضل شاکر اور ساجد بخاری نے سرکاری ملازمین کے احتجاجی جلسہ سے خطاب کرتے ہوئے کہا  کہ حکومت نے  بجلی گیس پٹرول ادویات اور کھانے پینے کی اشیا کی قیمتوں میں آئے روز اضافہ کر کے عوام کو پریشان کیا ہوا ہے  آئے روز بڑھتی مہنگائی نیچھوٹے ملازمین پر عرصہ حیات تنگ کردیا ہے قلیل تنِِخواہ میں گزارہ کرنا مشکل  اور گھروں میں نوبت فاقوں  تک پہنچ گئی ھیدو وقت کی دال روٹی کا حصول  ملازمین کیلئے مشکل ھوتاجارہا ھے ایپکا حکومت کی ملازم کش پالیسی کو یکسر مسترد کرتی ھے ہر ماہ پٹرول بجلی گیس و ادویات مہنگا کر کے مہنگائی کا طوفان کھڑا کر دیتی ہے جس سیچھوٹے ملازمین کی زندگی اجیرن ہو گئی ھے  پنجاب کے ملازمین کی تنخواہیں اور مراعات دیگر صوبوں سے بہت کم ہیں وفاقی  حکومت چند مخصوص  اور چہیتے محکموں پر مسلسل نواز شات کی بارش کر رھی ھے جس کی وجہ سے دیگر محکمہ جات میں اپنے فرائض سرانجام دینے والے ملازمین میں احساسی محرومی بڑھتا جا رھا ھے گورنمنٹ  تمام ملازمین کو یوٹیلیٹی الانس ہاس ریکوزیشن سمیت یکساں مراعات دے کر امتیازی سلوک ختم۔کرے   گروپ انشورنس اور بہبود فنڈ کی رقم ریٹائرمنٹ پر یکمشت دی جائے  اور تمام ایڈھاک ریلیف کو بنیادی تنخواہ میں ضم کر کے تنخواہوں میں سو فیصد اضافہ کیا جائے ہاس رینٹ بنیادی تنخواہوں کا 60 کیاجائے ہم مطالبات کی منظوری تک ہر منگل کو احتجاج ہوگا مطبات منظور نہ ہونے کی صورت میں 10فروری کو اسلام آباد میں قومی اسمبلی کا گھیرا کریں گے۔ اس موقع پرضلعی عہدیداران ایپکا مجاہد گورمانی،میاں اقبال چھجڑا،ساجد حسین بخاری، راشد رحیم راجو، ریاض لغاری، ممتاز کھرل، اورعباس بلوچ نیبھی جلسہ سے خطاب کیا جبکہ ڈی سی آفس سے لیکر کچہری چوک تک  ریلی بھی نکالی گئی۔ ایپکا کے زیر اہتمام ڈپٹی کمشنر آفس خانیوال کے سبزہ زار میں ایک احتجاجی دھرنا دیا گیا جس میں ایپکا کے تمام گروپس نے اکھٹے احتجاجی مظاہرہ قلم چھوڑ ہڑتال کی جس میں میاں محمد عمران کمبوہ، ضلعی صدر ایپکا خانیوال راؤ محمد امجد، ضلعی صدر ایپکا خانیوال، چوہدری مسعود الرؤف کمبوہ، ضلعی جنرل سیکرٹری ایپکا خانیوال، مہر محمد ریاض، صدر پبلک ہیلتھ انجینئر نگ، مہر عبدالشکور، صدر محکمہ زراعت، چوہدری محمد شفیق، صدر بلڈنگ ڈیپارٹمنٹ، چوہدری عبدالرؤف کمبوہ، صدر لائیو سٹاک، مراتب حسین شہزاد، صدر ہائیر ایجوکیشن ڈیپارٹمنٹ، محمد ایوب سارتھ، صدر محکمہ فوڈ، احمد شبیر، صدر لوکل گورنمنٹ، امتیاز رفیق، محکمہ انہار، رانا انور الحق، محمد ابراہیم، محکمہ تعلیم، محمد حسین عطاری صدر LA یونین، خالد محمود عباسی، جنرل سیکرٹری، ریونیو ڈیپارٹمنٹ، انجم مشتاق، پبلک ہیلتھ انجینئر نگ، نے خطاب کیا، انہو ں نے اپیکا چارٹر آف ڈیمانڈ کی منظوری تک احتجاج جاری رکھنے کے عزم کا اعادہ کیا، مطالبات میں تمام ایڈ باک ریلیف ختم کر کے مہنگائی کے تناسب سے اضافہ کیا جائے، تمام سرکاری ملازمین کو بلا تفریق یوٹیلیٹی الاؤنس، سول سیکرٹریٹ ودیگر الاؤنس دیئے جائیں کلاس فورز کو بنیادی پے سکیل 5 دیا جائے، او ردیگر تمام مطالبات منظور فرمائے جائیں، اگر مطالبات 9 فروری تک منظور نہ کیے گئے تو 10 فروری کو اسلام آباد میں پارلیمنٹ کے سامنے دمادم مست قلندر ہو گا۔

ریلیاں 

مزید :

ملتان صفحہ آخر -