خیبرپختونخوا میں تیل نکالنے والی غیر ملکی کمپنی کے آفس پر دہشت گردوں کا حملہ، سیکیورٹی گارڈ جاں بحق، سپروائزر اغوا

خیبرپختونخوا میں تیل نکالنے والی غیر ملکی کمپنی کے آفس پر دہشت گردوں کا ...
خیبرپختونخوا میں تیل نکالنے والی غیر ملکی کمپنی کے آفس پر دہشت گردوں کا حملہ، سیکیورٹی گارڈ جاں بحق، سپروائزر اغوا

  

ہنگو(ڈیلی پاکستان آن لائن)دہشت گردی نے تیل نکالنے والی غیر ملکی کمپنی پر حملہ کرکے سیکیورٹی گارڈ کو قتل  جبکہ سپروائز کو اغوا ء کرلیا۔

تفصیلات کے مطابق بدھ اور جمعرات کی درمیانی شب نامعلوم عسکریت پسندوں کی جانب سے ضلع کرک اور ہنگو کے سرحدی علاقے میں کارروائی کی ۔کرک پولیس نے حملے کا مقدمہ نامعلوم افراد کے خلاف درج کرلیا ہے، ڈی پی او اکرام اللہ خان کا کہنا ہے کہ ملزمان کی تلاش کےلیے سرچ آپریشن شروع کردیا گیا ہے، دہشت گرد قانون کی گرفت سے بچ نہیں سکیں گے۔دہشت گردوں  کمپنی کے ایک کمپاؤنڈ پر جدید خود کارہتھیاروں سے حملے کے بعد فرار ہوگئے۔ پولیس کے مطابق جس علاقے میں کیمپ کو نشانہ بنایا گیا وہ دور دراز پہاڑی علاقہ ہے۔

وزیراعلیٰ خیبرپختونخوا محمود خان نے واقعہ کے مذمت کرتے ہوئے کہا کہ دہشتگردی میں ملوث عناصر ملک و قوم کی ترقی کے دشمن ہیں۔ محمود خان کا کہنا تھا کہ مغوی سپروائزر کی بازیابی کے لئے اقدامات کیے جائے۔وزیراعلیٰ محمود خان نے پولیس کو صوبے میں تیل نکالنے والی کمپنیوں کی سیکیورٹی بہتر بنانے کی ہدایت کرتے ہوئے کہا کہ آئندہ اس طرح کے ناخوشگوار کی روک تھام کے لئے موثر اقدامات اٹھائے  جائیں۔

مزید :

قومی -