افغان طالبان مزید قوت پکڑنے لگے، امریکہ پریشان

افغان طالبان مزید قوت پکڑنے لگے، امریکہ پریشان
افغان طالبان مزید قوت پکڑنے لگے، امریکہ پریشان

  


نیویارک (نیوز ڈیسک) امریکی اخبار ”نیویارک ٹائمز“ کے مطابق رواں گرمیوں کے دوران افغانستان میں طالبان نے متعدد اہم کامیابیاں حاصل کی ہیں اور دارالحکومت کے ارد گرد واقع علاقوں پر ان کی گرفت مضبوط ہوتی جارہی ہے۔ پہلے ملک کے جنوبی حصے میں طالبان کا زور زیادہ تھا لیکن اب کابل کے قریبی شہروں اور شاہراﺅں پر بھی طالبان طاقت پکڑ رہے ہیں۔ اخبار کے مطابق یہ رجحان مقامی سیکیورٹی فورسز کی نااہلی کی نشانی ہے اور انتہائی باعث تشویش ہے کہ نیٹو افواج کے انخلاءکے بعد ملک پر افغان حکومت کی گرفت بے حد کمزور پڑنے کا امکان ہے۔ دوسری جانب ملک کی سیاسی قیادت الیکشن نتائج کے تنازعات میں کھوئی ہوئی ہے۔ کاپیا صوبے میں طالبان سیکیورٹی فورسز کو کئی اضلاع سے بے دخل کرچکے ہین۔ کابل کے قریبی کئی اضلاع ایسے ہیں جہاں پر پولیس اہلکاروں نے اپنی جان بچانے کے لئے طالبان سے ڈیل کررکھی ہیں۔

گزشتہ ماہ کے دوران جلال آباد کا کنٹرول طالبان نے حاصل کرلیا ہے۔ دوسری جانب کابل کے جنوب میں لوگار اور وارداک کے بیشتر علاقوں میں وقتاً فوقتاً حملے ہوتے رہتے ہیں۔ دوسری جانب جانی نقصان کے حوالے سے مصدقہ اعدادوشمار میسر نہیں لیکن امریکی اخبار کے مطابق گزشتہ چند ماہ میں کئی ہفتے ایسے بھی گزرے ہیں جن کے دوران ہر ہفتے سو سے زائد افغان فوجی اپنی جانوں سے ہاتھ دھو بیٹھے۔

مزید : بین الاقوامی