یو بی جی میں فیڈریشن کے صدارتی امیدوار پرکوئی اختلاف نہیں،ترجمان

یو بی جی میں فیڈریشن کے صدارتی امیدوار پرکوئی اختلاف نہیں،ترجمان

  

کراچی( آن لائن )وفاق ایوانہائے تجارت وصنعت(ایف پی سی سی آئی) میں برسراقتداریونائٹیڈ بزنس گروپ(یو بی جی)کے ترجمان گلزار فیروز نے رائس ایکسپورٹرز ایسوسی ایشن آف پاکستان (ریپ)کے موجودہ وسابق عہدیداران کی جانب سے گزشتہ روز دیئے گئے اخباری بیان پر تعجب کا اظہار کرتے ہوئے وضاحت کی ہے کہ ایف پی سی سی آئی میں2017 کیلئے صدارتی منصب پر یونائٹیڈ بزنس گروپ(یو بی جی) کی جانب سے صدارتی امیدوار نامزد کرنے کے طریقہ کار پر گروپ میں کوئی بھی اختلاف نہیں ہے،صدارتی انتخاب یا دوسرے عہدے کے انتخابات میں حصہ لینا ایف پی سی سی آئی کی ایگزیکٹو کمیٹی کے ہرممبر کا جمہوری حق ہے اور بزنس کمیونٹی میں اہلیت کے حامل تمام افراد اس عہدے کیلئے یو بی جی کی سینٹر ل کور کمیٹی کو درخواست دے سکتے ہیں۔ گلزار فیروز نے اپنے ایک اخباری بیان میں کہا کہ افتخار علی ملک یو بی جی کے چیئرمین اور سینئربزنس لیڈرہیں اور ہم سب انکا بہت احترام کرتے ہیں،انہوں نے اگر کسی تقریب میں زبیر طفیل کا نام ایف پی سی سی آئی کی صدارت کیلئے لیا تھا تو انکی اپنی ذاتی رائے تھی اور مجموعی طورپریہ یو بی جی کا فیصلہ نہیں تھا،رائس ایکسپورٹرز ایسوسی ایشن کے عہدیداران نے بھی عبدالرحیم جانو کا نام صدارتی منصب کیلئے پیش کیا ہے یہ بھی ایسوسی ایشن کے اراکین کی ذاتی خواہش ہے اور اسے یو بی جی کا اعلان تو نہیں کہا جاسکتا۔انہوں نے کہا کہ عبدالرحیم جانو ہماری ٹیم کا حصہ ہیں اور انکی ہم بہت عزت کرتے ہیں کیونکہ وہ یو بی جی کے اہم ترین کارکن ہیں۔

ترجمان یو بی جی نے کہا کہ یونائٹیڈ بزنس گروپ کا یہ متفقہ فیصلہ ہے کہ جس طرح گزشتہ سالوں میں ایف پی سی سی آئی کے صدر اور سینئرنائب صدر کی نامزدگی یو بی جی کی سینٹر ل کورکمیٹی نے کی تھی اسی طرح 2017کیلئے بھی رواں سال اکتوبر میں یو بی جی کی سینٹرل کورکمیٹی کا اجلاس ہوگا ،اجلاس میں جو امیدوار بھی صدر اورسینئرنائب صدر کے عہدوں کیلئے اپنے آپ کو پیش کرے گا تو ایک سے زائد امیدوار ہونے کی صورت میں نامزدگی کیلئے خٖفیہ رائے شماری ہوگی جس میں جمہوری طریقے سے امیدوار کی نامزدگی کا فیصلہ کیا جائے گا۔گلزار فیروز نے رائس ایکسپوٹرزایسوسی ایشن سے سوال کیا کہ جب یو بی جی کا ترجمان میں خود ہوں تو پھریہ بھی بتادیا جائے کہ کون سے ترجمان نے یو بی جی کے صدر کی نامزدگی کے حوالے سے کسی اخباری رپورٹرکو کوئی بیان دیا،میں یہ بات واضح کردینا چاہتا ہوں کہ میں نے ترجمان کی حیثیت سے اس سلسلے میں کوئی بیان نہیں دیا تھا کیونکہ مجھے جمہوری اقدار کا بخوبی علم ہے۔

مزید :

کامرس -