پشاورمیں دہشگردی کا منصوبہ ناکام، انتہائی مطلوب دہشت گرد گرفتار

پشاورمیں دہشگردی کا منصوبہ ناکام، انتہائی مطلوب دہشت گرد گرفتار

  

پشاور(کرائمز رپورٹر)کیپٹل سٹی پولیس نے پشاورمیں دہشگردی کا منصوبہ ناکام بناتے ہوئے پشاور اورگردونواح میں سرکاری سکولوں کی عمارتوں کو بم دھماکوں سے تباہ کرنے والا کالعدم تنظیم سے تعلق رکھنے والے انتہائی مطلوب دہشتگرد کو گرفتار کرکے اس کے قبضہ سے دو ہینڈ گرنیڈ بم اوراسلحہ برآمد کرلیا جبکہ ملزم کے خلاف مقدمہ درج کرکے تفتیش کیلئے خفیہ مقام پر منتقل کردیا تفصیلات کے مطابق گزشتہ روز چیف کیپیٹل سٹی پولیس مبارک زیب خان کو خفیہ زرائع سے اطلاع ملی تھی کہ پشاور اورگردونواح میں سرکاری سکول وکالجز کی عمارتوں اورسرکاری املاک کو ای آئی ڈی بموں سے تباہ کرنیوالاانتہائی مطلوب اشتہاری ملزم شمشاد ولد اول خان سکنہ باڑہ خیبر ایجنسی علاقہ غیر کے راستہ پشاورمیں کسی تخریبکاری کی واردات کی غرض سے داخل ہورہا ہے اطلاع ملنے پر انہوں نے ایس ایس پی آپریشنز عباس مجید خان مروت کی سربراہی میں اے ایس پی حیات آباد حسن افضل اورایس ایچ او تھانہ سربند قاضی نثار بمعہ دیگر پولیس ا ہلکار ایک ٹیم تشکیل دی جنہوں نے کامیاب کاروائی کرتے ہوئے سربند کے علاقہ بھٹہ تل خور میں چھاپہ مار کروہاں موجود دہشتگرد شمشاد ولد ا ول خان سکنہ باڑہ کو گرفتار کرکے اس کے قبضہ سے دو دستی بم اورایک 30 بور پستول برآمد کرلیا گرفتار ہونیوالے ملزم کا تعلق کالعدم تنظیم لشکر اسلام منگل باغ گروہ کیساتھ تھا اوروہ عرصہ دراز سے پشاوراورنواحی علاقہ جات میں واقع سرکاری سکول کی عمارتوں میں رات کیوقت بم دھماکہ کرنے کے و اقعات میں ملوث تھااور 2011 میں سربند کے علاقہ اچینی میں سکول کی عمارت کو بم دھماکہ سے اڑانے کے کیس میں مطلوب بھی تھا گرفتار ہونے والا دہشتگرد پشاورمیں کسی عمارت کو اڑانے یا کسی تخریبکاری کی واردات کی غرض سے ہی آرہا تھا کہ پولیس کی کامیاب کاروائی کے نتیجہ میں گرفتار کرلیا گیا پولیس نے ملزم کے خلاف دہشتگر دی سمیت دیگر دفعات کے تحت مقدمات درج کرکے تفتیش کیلئے نامعلوم مقام پر منتقل کردیا ہے۔

مزید :

راولپنڈی صفحہ اول -