بٹ خیلہ ،مضاربت کے نام پر درجنوں افراد لوٹ لئے گئے

بٹ خیلہ ،مضاربت کے نام پر درجنوں افراد لوٹ لئے گئے

  

بٹ خیلہ(بیورورپورٹ)نیب گرفتار میزبان سٹور کے مالک غلام رسول ایوبی سے مضاربت کے نام پر الہ ڈھنڈ ڈھیری کے درجنوں افراد سے لوٹ لئے گئے ایک کروڑ روے وصول کرکے متاثرین کو رقم ادا کریں سادہ عوام نے مفتی ضیاء اسلام کے ہاتھوں پر رقم جمع کیا ہے مگر تین سال گزرنے کے باوجود متاثرین کو ایک پایہ تک نہیں ملا ان خیا لات کا اظہار الہ ڈھنڈ ڈھیری ملاکنڈ ایجنسی کے متاثرین حاجی نیک حضرت باچہ،حاجی امیرذادہ ،گل افضل خان ،حاجی بادشاہ ذادہ ،نذیر احمد ،شاہ حسین اور دیگر درجنوں افراد نے میڈیا سے بات چیت کرتے ہوئے کیا انہوں نے کہا کہ نیب نے مضاربہ کے مرکزی کردار ادا کرنے والے غلام رسول ایوبی کو گرفتار کیا ہے مگر تاحال کوئی پتہ نہیں کہ نیب نے ان سے کتنی رقوم وصول کی ہیں یا نہیں تاہم غلام رسول ایوبی کے طرف سے بعض متاثرین کو عدالت سے دستخط شدہ سٹامپ پیر ملے ہے اور کسی کو نہیں ملے انہوں نے کہا کہ کہ ہم نے اپنے عمر بھر کی جمع پونچی اور جائیدادیں فروخت کرکے رقوم انکے ساتھ جمع کیے اوراب تک مفتی ضیاء اسلام ہمیں مختلف بھانوں کے ذریعے ٹرخا رہے ہیں اور منافع کے نام پر لوگوں سے وصول شدہ رقم واپس نہیں کر رہے ہیں انہوں نے چیف جسٹس اف پاکستان انور ظہیر جمالی اور نیب کے چےئرمین قمر الزمان چوھدری سے ھمدردانہ اپیل کی ہے کہ نیب کے زیر حراست غلام رسول ایوبی سے متاثرین کے رقوم واپس لیا جائے جبکہ ملاکنڈ انتظا میہ الہ ڈھنڈ ڈھیری کے مفتی ضیاء اسلام کے خلاف فوری کاروائی کریں بصورت دیگر اپنے بال بچوں کے ہمراہ شدید احتجاج پر مجبور ہونگے

مزید :

پشاورصفحہ آخر -