ای پی آئی نوشہرہ کے کنٹریکٹ ملازمین کا احتجاجی مظاہرہ

ای پی آئی نوشہرہ کے کنٹریکٹ ملازمین کا احتجاجی مظاہرہ

  

نوشہرہ(بیورو رپورٹ)ای پی آئی نوشہرہ کے کنٹریکٹ اہلکاروں نے خالی پوسٹو پر تعینات نہ کرنے کے خلاف احتجاج کرتے ہوئے کہا ہے کہ 28مئی2016 کو کے پی کے اسمبلی نے ہمیں مستقل کرنے کا بل بھی منظور کیا تھا لیکن اسکے باوجود بھی ہمیں نظر انداز کرکے ای پی آئی نے خالی ہونے والی پوسٹو پر باہر سے افراد بھرتی کرکے ہمارے حق پر ڈاکہ ڈالا ہے۔ہمارے پاس ای پی آئی کا کئی سالہ تجربہ اور مطلوبہ اہلیت بھی موجود ہے،صوبائی حکومت ہمیں انصاف فراہم کرے،وزیر اعلیٰ کی اپیل پر ہم نے احتجاج بھی ختم کیا تھا جسکے باوجود ہماری تنخواہیں ایک سال سے بند ہیں ان خیالات کا اظہارنوشہرہ ای پی آئی ورکزرزمعین اللہ ،نصیر خان ،محمد وسیم ،سیاب الدین نے نوشہرہ پریس کلب میں پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کیاانہوں نے کہا کہ ملک کے دیگر تین صوبوں میں ایک سالہ ای پی آئی ڈپلومہ ہولڈر کو ای پی آئی میں مستقل بنیادوں پر بھرتی کیا جاتا ہے لیکن خیبرپختونخوا میں ایک سالہ ای پی آئی ڈپلومہ ہولڈر کو نظر انداز کرکے ہیلتھ ٹیکنالوجی کے دوسالہ ڈپلومہ ہولڈرزکو پولیو ورکزاور سپروائزر بھری کیا جارہا ہے جو کہ ہمارے ساتھ سراسر ناانصافی اور زیادتی ہے،کیونکہ ہیلتھ ٹیکنالوجی کے دو سالہ ڈپلومہ ہولڈر پولیوکے معمول ویکسینیشن کا کوئی تجربہ نہیں رکھتا ۔انہوں نے صوبائی حکومت سے مطالبہ کیا کہ وہ پی ایچ سی کو ختم کرکے پولیوورکرزکو سپروائزرکی بھری کیلئے ایک سال ای پی آئی ڈپلومہ کو میریٹ بنائے۔

مزید :

پشاورصفحہ آخر -