خوشیاں بانٹنے سے بڑھتی ہیں، زندگی کا مقصد خدمت خلق ہونا چاہیے: نورالحسن تنویر

خوشیاں بانٹنے سے بڑھتی ہیں، زندگی کا مقصد خدمت خلق ہونا چاہیے: نورالحسن تنویر
خوشیاں بانٹنے سے بڑھتی ہیں، زندگی کا مقصد خدمت خلق ہونا چاہیے: نورالحسن تنویر

  

دبئی (طاہرمنیر طاہر) عید آئی اور چلی گئی لیکن بیرون ملک مقیم پاکستانیوں کی طرف سے عید کی خوشیاں منانے کا سلسلہ تاحال جاری ہے۔ امارات میں مقیم پاکستانی مختلف حیلوں بہانوں سے آپس میں مل بیٹھے اور باہمی گفت و شنید کا موقع نکال ہی لیتے ہیں۔ بالکل ایسی طرح گزشتہ روز عید ملن تقریب میں مختلف طبقہ فکر سے تعلق رکھنے والے ہم وطنوں کو ایک ساتھ بیٹھنے کا موقع مل گیا جس کا اہتمام دبئی میں مقیم پاکستانی بزنس وومن فرزانہ کوثر نے کیا تھا۔ عید ملن تقریب میں چودھری نورالحسن تنویر، میاں منیر ہانس، خواجہ عبدالوحید پال، فرزانہ چغتائی، فریحہ فاروقی، صبیحہ صبا، فرزانہ منصور اور تابش زیدی نے شرکت کی۔ اس موقع پر باہمی گفت و شنید کے دوران مختلف النوع موضوعات پر تبادلہ خیال کیا گیا جس میں عوامی فلاح و بہبود کے ساتھ ساتھ قومی، ملکی و ملی حالات پر بھی تبصرہ ہوا۔ اس موقع پر چودھری نورالحسن تنویر نے کہا کہ ہماری زندگی کا مقصد دوسروں کی خدمت ہونا چاہیے۔ اپنے اور اپنے اہل و عیال کے لئے تو سب ہی بہت کھ کرتے ہیں لیکن خلق خدا کے لئے بھی کچھ کرنا چاہیے تاکہ اس دنیا میں آنے کا مقصد پورا ہوا۔ امارات میں مکتلف شعبوں میں نمایاں خدمات انجام دینے والوں کی حوصلہ افزائی کے لئے OPUF کی طرف سے خصوصی ایوارڈز دینے کا مشورہ میاں منیر ہانس نے دیا جو تسلیم کرلیا گیا جبکہ خواجہ عبدالوحید پال نے 14 اگست 2016ءکو یوم آزادی پر جوش طریقہ سے منانے کے لئے قرار داد پیش کی جسے متفقہ رائے سے منظور کرلیاگیا اور اعلان کیا گیا کہ حسب سابق امسال بھی دبئی میں یوم آزادی روایتی جوش و خروش سے منایا جائے گا۔ عید ملن کی اس تقریب میں ایک ساتھی یونس پراچہ جو آجکل سالانہ تعطیلات پرپاکستان گئے ہوئے ہیں ان کی کمی کو شدید محسوس کیا گیا اور ان کے لئے نیک تمناﺅں کا اظہار کیا گیا۔ عید ملن تقریب کے انعقاد پر تمام شرکاءنے فرزانہ کوثر کا بے حد شکریہ ادا کیا جبکہ میزبان فرزانہ کوثر نے تقریب کو رونق بخشنے پر تمام مہمانوں کا تہہ دل سے شکریہ ادا کیا۔

مزید :

عرب دنیا -