چین کے صوبے شین ڈونگ کے شہر جنان میں ’’ پنجاب شین ڈونگ بزنس کانفرنس‘‘ کا انعقاد،1320 میگاواٹ ساہیوال کول پاور پلانٹ 2 برس سے بھی کم عرصے میں مکمل ہوگا: شہبازشریف

چین کے صوبے شین ڈونگ کے شہر جنان میں ’’ پنجاب شین ڈونگ بزنس کانفرنس‘‘ کا ...
چین کے صوبے شین ڈونگ کے شہر جنان میں ’’ پنجاب شین ڈونگ بزنس کانفرنس‘‘ کا انعقاد،1320 میگاواٹ ساہیوال کول پاور پلانٹ 2 برس سے بھی کم عرصے میں مکمل ہوگا: شہبازشریف

  

شین ڈونگ /لاہور ( این این آئی)چین کے صوبے شین ڈونگ کے شہر جنان میں’’ پنجاب شین ڈونگ بزنس کانفرنس‘‘ کا انعقادکیاگیا۔’’پنجاب شین ڈونگ بزنس کانفرنس ‘‘کی صدارت وزیراعلیٰ پنجاب محمد شہبازشریف اورشین ڈونگ صوبے کے نائب گورنرجی ژاہ زنگ کی نے مشترکہ طورپر کی۔وزیراعلیٰ پنجاب محمد شہبازشریف نے ’’پنجاب شین ڈونگ بزنس کانفرنس‘‘ سے خطاب کرتے ہوئے کہاکہ پاکستان اور چین کے سرمایہ کار اور صنعتکار آج تاریخ کے اہم موڑ پراکٹھے ہوئے ہیں جب چین کے46 ارب ڈالر کے عظیم سرمایہ کاری پیکیج پر ایک برس کے عرصے میں عظیم الشان کام ہو چکا ہے اور اس تاریخ ساز پیکیج کے تحت لگائے جانیوالے منصوبے کسی ایک خطے تک محدود نہیں بلکہ پاکستان کے طول و عرض پر پھیلے ہوئے ہیں۔انہوں نے کہا کہ دنیا میں روزانہ ہزاروں معاہدے ہوتے ہیں لیکن ان پر عملدرآمد کتنوں پر ہوتا ہے، یہ سوالیہ نشان ہے لیکن چائنہ پاکستان اکنامک کوریڈور کے تحت ہونے والے معاہدوں پر عملدرآمد کی رفتار اپنی مثال آپ ہے۔

وزیراعلیٰ نے کہا کہ ساہیوال میں 1320 میگاواٹ کے کول پاور پلانٹ پر جون 2015 میں کام شروع کیا گیا اور اس منصوبے پر اب تک نصف کام مکمل ہوچکا ہے اوریہ منصوبہ 2 برس سے بھی کم عرصے میں مکمل ہوگا۔ انہوں نے کہا کہ میں نے بھارت میں تلونڈی کے مقام پر چین کے تعاون سے لگنے والا اسی طرح کا کول پاور پلانٹ دیکھا ہے جو ساڑھے چار برس میں مکمل ہوا۔ انہوں نے کہا کہ اس میں کوئی شک نہیں کہ چینی کمپنیاں پاکستان میں بھی منافع کماتی ہیں لیکن پاکستان میں چینی کمپنیوں کی برق رفتاری پاک چین دوستی کا کرشمہ ہے۔انہوں نے کہا کہ زلزلہ ہو یا سیلاب یا کوئی اور آفت، چین ہمیشہ پاکستان کیساتھ کھڑا رہا ہے۔ پاک چین دوستی کی کہانی دو محبت کرنے والوں کی کہانی ہے اوراس محبت میں روزبروز اضافہ ہورہا ہے۔

چینی کمپنیوں کے چیف ایگزیکٹوزنے وزیراعلیٰ سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ یہ آپ کا بھر پور تعاون ہی ہے جس کے باعث ساہیوال کول پاور پلانٹ پر اتنا تیز کا م ہورہا ہے ۔دنیا میں آج تک ایسے بڑے منصوبے پر اتنی تیزی سے کام نہیں ہوا ۔انہوں نے کہا کہ ساہیوال کول پاور پراجیکٹ کیلئے دسمبر 2017ء تک کی ڈیڈلائن دی گئی ہے لیکن اس سے بہت پہلے یہ منصوبہ مکمل کرلیں گے۔وزیراعلیٰ شہبازشریف نے کہا کہ توانائی بحران کے خاتمے کیلئے چین کا بے پایاں تعاون کبھی فراموش نہیں کرسکتے ۔ساہیوال کول پاور پراجیکٹ پاک چین دوستی میں نیا سنگ میل ثابت ہوگا۔

مزید :

لاہور -