چین کابڑے سرکاری اداروں کو جائنٹ سٹاک فرموں میں تبدیل کرنے کا منصوبہ

چین کابڑے سرکاری اداروں کو جائنٹ سٹاک فرموں میں تبدیل کرنے کا منصوبہ

بیجنگ (اے پی پی) چین رواں سال کے آخر تک اپنے بڑے سرکاری اداروں کو کارپوریٹ گورنس پالیسیوں کے تحت جائنٹ سٹاک فرموں میں تبدیل کر دے گا۔ذرائع کے مطابق چین میں بڑے سرکاری اداروں کو مشترکہ سٹاکس فرموں میں تبدیل کرنے کا عمل شروع ہے جو کہ اس سال کے آخر تک مکمل ہو جائے گا اور اب تک 90 فیصد بڑے سرکاری اداروں میں یہ عمل مکمل کر لیا گیا ہے ۔اس عمل سے جہاں بڑے سرکاری اداروں کے ذمے واجب الادا قرضوں کی ادائیگی بہتر ہو گی ۔

وہاں مسابقت کی صلاحیت اور کارکردگی بہتر ہونے کے ساتھ ان کو جدید خطوط پر استوار ہونے میں مدد ملے گی۔ذرائع کے مطابق ابھی یہ واضح نہیں ہوا کہ ان جائنٹ سٹاک فرموں میں نجی سرمایہ کاری کی اجازت دی جائے گی یا وہ اپنے شیئرز محض سٹاک مارکیٹس میں لسٹ کریں گے۔چینی کابینہ کی مرتب کردہ سفارشات کے مطابق ان بڑے سرکاری اداروں کو مشترکہ سٹاکس فرموں میں تبدیل کرنے کے بعد ان اداروں کے بورڈ آف ڈائریکٹرز تشکیل دیئے جائیں گے،ان اداروں کی پیداوار اور کارپوریٹس منافعوں کو مدنظر رکھتے ہوئے ملازمین کی تنخواہوں کے کوریڈورز بنائے جائیں گے۔ چینی حکومت اقتصادی اصلاحات کے تحت یہ اقدامات کر رہی ہے جس دوران افادیت نہ رکھنے اور سفید ہاتھی ثابت ہونے والے اداروں کو یکسر ختم کر دیا جائے گا۔

مزید : کامرس