اعجاز احمد چوہدری کی قیادت میں دیگر پارٹی راہنماؤں کاجنرل ہسپتال کا دورہ

اعجاز احمد چوہدری کی قیادت میں دیگر پارٹی راہنماؤں کاجنرل ہسپتال کا دورہ

لاہور (نمائندہ خصوصی) پاکستان تحریک انصاف پنجاب کے سابقہ صدر اعجاز احمد چوہدری کی قیادت میں دیگر پارٹی راہنماؤں نے جنرل ہسپتال کا دورہ کیا اور سانحہ سبزی منڈی کوٹ لکھپت کے زیر علاج زخمیوں کی عیادت کی ۔ اعجاز احمد چوہدری نے زخمیوں کی عیادت کرنے کے بعد میڈ یا کے نمائندوں سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ تحریک انصاف شہداء کے خاندانوں کے غم میں برابر کی شریک ہے موجودہ حکومت نے ابھی تک طالبان کی مذمت نہیں کی جس نے بھی اس حملے کی ذمے داری قبول کی وہ دنیا اور آخرت میں تباہ و برباد ہونگے ، رینجر کو پنجاب میں فوری اختیارات دینے چاہیں ، پنجاب کا وزیر قانون دہشت گردوں کا سہولت کار ہے اور اس دھماکے کا ذمہ دار بھی وہی ہے۔

، اعجاز احمد چوہدری نے کہا کہ تجاوزات کا حکم امتناعی کے باوجود گرایا جا رہا ہے جو کہ کھلی ریاستی دہشت گردی کے متراد ف ہے شاہی خاندان نے سبزی منڈی کی زمین پر قبضہ کر لیا ہے ، سانحہ پر پنجاب اسمبلی اور قومی اسمبلی میں بھرپور آواز بلند کریں گے ۔

، دہشت گردی کو ختم کرنے کے لئے نیشنل ایکشن پلان پر عمل درآمد اشد ضروری ہے ، وفاقی حکومت نیکٹا کو فعال نہیں بنا رہی ،یہاں تمام ایجنسیوں کی خفیہ معلومات آپس میں شئیر کی جانی تھی،انہوں نے کہا کہ حکمرانوں کو ملک کے مشکل حالات پر کوئی نظر نہیں ، نواز شریف مری کے بعد مالدیپ کے دورے پر روانہ ہو گئے ، پاکستانی قوم نے دہشت گردی کی جنگ میں بھاری قیمت ادا کی ہے ، ڈیڑھ سال سے حکومت اپنی چوری کو بچا رہی ہے ، وفاقی اور صوبائی وزراء کی ساری توجہ کرپٹ حکمرانوں کو بچانے اور تحفظ کرنے میں لگی ہوئی ہے ، سپریم کورٹ سے اپیل کرتے ہے کہ وہ پانامہ کیس کا فیصلہ فوری سنائیں، انہوں نے کہا کہ بارہ ارب روپے سیف سٹی کے پراجیکٹ پر جھونک دیے گئے ، لیکن دھماکے کی جگہ لگا ناکارہ کیمرے نے شہباز شریف کی نام نہاد گڈ گورنس کا پول کھول دیا ہے ، پولیس اہلکاروں سمیت دیگر خاندانوں سے اظہار ہمدرد ی کرتا ہوں ، ڈاکٹرز زخمیوں کا بھرپور خیال رکھ رہے ہیں اور انہیں کوئی پریشانی نہیں ۔

مزید : میٹروپولیٹن 4