ملک غیر یقینی صورتحال سے دوچار ہے ، سپریم کورٹ پاناما کیس کا فیصلہ جلد سنائے : عمران خان

ملک غیر یقینی صورتحال سے دوچار ہے ، سپریم کورٹ پاناما کیس کا فیصلہ جلد سنائے ...
 ملک غیر یقینی صورتحال سے دوچار ہے ، سپریم کورٹ پاناما کیس کا فیصلہ جلد سنائے : عمران خان

  

اسلام آباد (آن لائن)پاکستان تحریک انصاف کے چیئر مین عمران خان نے کہا ہے کہ سپریم کورٹ پانامہ کیس کا فیصلہ جلد سنائے تاکہ ملک آگے بڑھ سکے۔ اگر خدا نخواستہ میں نا اہل ہوا تو یہ بہت چھوٹی قیمت ہو گی۔ نواز شریف کی نااہلی کا فیصلہ آیا تو اسلام آباد میں تاریخی جشن بنے گا۔ میرے چند لاکھ کے فلیٹ کو اربوں روپے کے فلیٹ سے ملا کر قوم کو بے وقوف بنایا جا رہاہے۔ پوری قوم سپریم کورٹ کے فیصلے کا انتظار کر رہی ہے۔ پورا ملک اس فیصلے کی وجہ سے رکا ہوا ہے۔ ملک غیر یقینی صورتحال سے دوچار ہے۔ ہماری عدالت سے درخواست ہے کہ فیصلہ جلد سنایا جائے تاکہ قوم آگے بڑھ سکے۔ اسلام آباد میں گزشتہ روز میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے عمران خان نے کہا کہ ساری حکومت وزیراعظم کی کرپشن چھپانے میں لگی ہوئی ہے۔ یہ عوام کو 30سال سے بے وقوف بنا رہے ہیں۔ لوگوں کو خریدنے کیلئے پیسہ استعمال کیا جا رہا ہے۔ لاہور میں اتنا بڑا حادثہ ہوا اور وزیراعظم مالدیپ چلے گئے ۔ کئی ممالک نے وزیراعظم نواز شریف کو دعوت دے کر منسوخ کر دی۔ ان ممالک کو پتہ ہے کہ نواز شریف پر کرپشن کے کیسز چل رہے ہیں۔ عمران خان نے کہا کہ میں 24سال کی عمر سے کرکٹ کھیل رہا ہوں۔ صرف میں ہی نہیں میرے ساتھ کرکٹ کھیلنے والے سارے کھلاڑیوں کے انگلینڈ میں فلیٹ تھے۔ دنیا کا نمبر1آل راؤنڈر 11سال کرکٹ کھیل کر 60لاکھ روپے کا فلیٹ خریدتا ہے۔میرے باہر کمائے پیسے پر اس ملک میں ٹیکس لگتا تھا لیکن اس نے کچھ نہیں کیا۔ فلیٹ لینے کی منی ٹریل جو ناممکن تھی وہ بھی دکھا دی۔ میں نے پیسہ باہر کمایا اس میں کون سی غیر قانونی چیز تھی؟ ان کا شکریہ میں نے40سال کی منی ٹریل ڈھونڈ لی ہے۔ انہوں نے کہا کہ میڈیا کا کام کسی کو بچانا نہیں ہے، میڈیا کا کام جمہوریت بچانا ہے۔ مافیا کے خلاف کھڑے ہونیو الے میڈیا ہاؤسز کو سلام پیش کرتا ہوں۔ ایک میڈیا ہاؤس نواز شریف کی کرپشن بچا رہا ہے کبھی کسی نے سنا ہے کہ کسی وزیراعظم نے دبئی کا اقامہ لیا ہو اور بیرون ملک نوکری کر رہا ہو۔ ایک مولانا بھی وزیراعظم کو بچا رہا ہے یہ سارے کرمنل پرائز ہیں۔ انہوں نے کہا کہ اسحاق ڈار کے دبئی میں ڈیڑھ، ڈیڑھ ارب کے 2فلیٹ ہیں۔ ایک بیورو کریٹ کا پنڈی میں2ارب کا فلیٹ بن رہا ہے۔میں فلیٹ فروخت کر کے پیسہ پاکستان لایا۔ میں نے منی لانڈرنگ کی نہ ہی کبھی کرپشن کی۔عمران خان نے کہا کہ کسی کو کسی جرم پر نا اہل کیا جاتا ہے۔ اگر خدا نخواستہ مجھے نا اہل کیا بھی جاتا ہے تو گاڈ فادر کو بے نقاب کرنے کی یہ بہت چھوٹی قیمت ہو گی۔ میں نے سپریم کورٹ میں ساری منی ٹریل دیدی۔ شریف خاندان نے ایک بھی منی ٹریل نہیں دی۔ ایفی ڈرین کیس پکڑا جانے والا مجھ پر کیس کر رہا ہے۔ اب یہ جہانگیر ترین کو بھی عدالت میں لے آئے ہیں۔ میرا ،جہانگیر ترین اور علیم خان کا پاناما میں نام ہی نہیں ۔ انہوں نے کہا کہ نواز شریف مافیا کا ججز پر بہت پریشر ہو گا لیکن اب تک جو چیزیں سامنے آئی ہیں اس سے لگتا ہے کہ نواز شریف نا اہل ہونے سے کبھی نہیں بچ سکتے اور جس دن نواز شریف نا اہل ہوں گے اسلام آباد میں تاریخی جشن منائیں گے۔ عمران خان نے کہا کہ خورشید شاہ اور پیپلز پارٹی اس وقت بڑا اہم کردار ادا کر رہے ہیں۔ مجھے خوشی ہے کہ وہ فرینڈلی اپوزیشن سے نکل کر اصل اپوزیشن پر آ گئے ہیں۔

عمران خان

مزید : صفحہ اول