خیبر پختونخوا میں پلاسٹک سے ایل پی جی تیار کرنے کا پلانٹ نصب

خیبر پختونخوا میں پلاسٹک سے ایل پی جی تیار کرنے کا پلانٹ نصب

  

پشاور(آئی این پی)خیبر پختونخوا کے وزارت سائنس و ٹیکنالوجی نے پلاسٹک سے ایل پی جی تیار کرنے کا پلانٹ لگا لیا جس کا افتتاح مشیر سائنس و انفارمیشن ٹیکنالوجی ضیا اللہ خان بنگش اور معاون خصوصی برائے اطلاعات کامران بنگش نے کر دیا۔ خیبر پختونخواوزارت سائنس وٹیکنالوجی نے کلین اینڈ گرین خیبر پختونخوا مشن کے تحت پشاور میں پلاسٹک سے ایل پی جی تیار کرنے کا پائلٹ پلانٹ لگا لیا۔ پلانٹ سے 100 کلو گرام پلاسٹک سے 60 کلو گرام ایل پی جی گیس حاصل ہوگی جس سے نہ صرف آلودگی اور پلاسٹک کچرے میں کمی واقع ہوگی بلکہ عوام کو کو کم ریٹ پر ایل پی جی گیس میسر ہونے کے ساتھ روزگار کے نئے مواقع بھی پیدا ہوں گے۔ افتتاحی تقریب سے خطاب میں مشیر سائنس و ٹیکنالوجی ضیا اللہ خان بنگش نے کہا کہ اس ٹیکنالوجی کو صوبے کے دوسرے اضلاع اور بڑے شہروں تک توسیع دی جائے گی انہوں نے کہا کہ شہروں میں پلاسٹک کی وجہ سے نکاسی آب کا مسئلہ بھی مستقل بنیادوں پر اس منصوبے سے ختم ہو جائے گا اور سیاحتی مقامات میں آلودگی بھی ختم ہوگی جبکہ ایل پی جی کی کم قیمت پر دستیابی کی وجہ سے جنگلات کی کٹائی پر بھی قابو پایا جاسکے گا۔ انہوں نے کہا کہ وزیراعظم عمران خان کے ویژن کے مطابق محکمہ سائنس اینڈ انفارمیشن ٹیکنالوجی کلین اینڈ گرین پاکستان منصوبے کے تحت عملی اقدامات کر رہی ہیں۔

کامران بنگش

مزید :

صفحہ آخر -