جندول‘ ممبران اسمبلی تاحال کوئی منصوبہ شروع نہ کر سکے

  جندول‘ ممبران اسمبلی تاحال کوئی منصوبہ شروع نہ کر سکے

  

جندول(نمائندہ پاکستان)جندول سب ڈویژن میں سمیت لوئر دیر اور دیر بالامیں ایم پی ایز اور ایم اینز صاحبان سے تاحال اپنا فنڈ یا نیاء سکیم تو نا ہوسکا،اپنے ناکامی چھپانے کے خاطر پی ٹی ائی اور اے این پی کے ایم پی ایز سابقہ ناظمین کے سیونگ فنڈ کے پیچھے لگ ہے جو بہت افسوسناک ہے سابقہ ناظمین وحید اللہ مشوانی ملک حضرت خان،خورشید الحق وغیرہ نے گزشتہ گزشتہ روز میڈیا کو تفصلات بتاتے ہوئے کہا کہ موجودہ ایم پی ایز اور ایم این ایز نے دوسال اسمبلیوں میں رہنے کے باجود کوئی نیاء منصوبہ یا سیکم نہیں لائی ما سوائے پرانی سکیموں پر نیاء تختی لگانے کی مگر افسوس ہے کہ اب موجودہ ایم این ایز اور ایم پی ایز اپنے ناکامی چھپانے کے خطر سابقہ ضلعی،تحصیل اور ولیج ناظمین کے منظور شدہ سیونگ فنڈ کے پیچھے لگا ہے جو پی ٹی ائی اور عوامی نیشنل پارٹی کے ایم این ایز اور ایم پی ایز کا نا اہلی کو ظاہر کردیتے ہیں۔انہونے کہا کہ جندول سمیت لوئر دیر اور دیر بالا کے عوام نے منتخب نمائندوں کو اووٹ علاقائی ترقیاتی نیاء سکیمیں لانے کیلئے دیا تھا،دوسرے لوگوں کے پرانا منظور شدہ سکیموں پر نیاء تختی لگانے کیلئے تو نہیں دیا تھا۔انہونے حکومتی وقت سے مطالبہ کرتے ہوئے کہا کہ سابقہ ناظمین نے اپنے سیونگ فنڈبہت مشکل سے اکٹھا کراڈی پی بنکر مقامی لوگوں کے مشورے کے مطابق سکیمیں منظور کرلیا تھا اس پر ایم پی اے ایم این اے کا کوئی حق نہیں بنتا،اگر مقامی ایم این ایز ایم پی ایز نے اپنے ناکامی چھپانے کے کوششوں کے بناپر سابقہ ناظمین کا سیونگ فنڈ پر سیاست چمکانے کے کوشش کیں تو تمام ناظمین عدالتوں کے دروازے کھٹکٹائی گی

مزید :

پشاورصفحہ آخر -