چارسدہ‘ ذہنی مریض کے اندھے قتل کیس کا ڈراپ سین

      چارسدہ‘ ذہنی مریض کے اندھے قتل کیس کا ڈراپ سین

  

چارسدہ (بیورورپورٹ) ذہنی مریض کے اندھے قتل کیس کا ڈراپ سین۔ مریض کو تشدد سے قتل کرنے والے ملزم گرفتار۔ ملزم کی نشاندہی پر الہ قتل برامد۔۔ تفصیلات کے مطابق عمرزئی پولیس کوانتہائی دلخراش واقعہ نامعلوم ملزم کے ہاتھوں ذہنی مریض کو بے دردی سے قتل کرنے کی اطلاع ملی۔ مدعی خائستہ رحمن ولد نورحمن ساکن شیرپاو کے مطابق مقتول شیر رحمن ولد نور رحمن میرا بھائی تھا اکثر اوقات گھر سے باہر رہا کرتا تھا۔ بھائی کے قتل ہونے اطلاع ملتے ہی موقع پر پہنچا تو کسی نامعلوم ملزمان نے تشددکا نشانہ بنا کر بے دردی سے قتل کیا تھا جبکہ ہماری کسی سے دشمنی یا دلبدی نہیں ہے۔ تھانہ عمرزئی میں نامعلوم ملزم/ملزمان کے خلاف مقدمہ درج کرکے تفتیش شروع کر دی گئی۔ افسوسناک واقعہ کا فوری نوٹس لے کر ڈی پی او چارسدہ محمد شعیب خان نے ایس پی انوسٹی گیشن افتخار شاہ خان، ڈی ایس پی تنگی خالد خان، ایس ایچ او تھانہ عمرزئی فضل داود خان اور انوسٹی گیشن افیسر مظفر خان پر مشتمل ٹیم تشکیل دے ملزم کی گرفتاری اور اصل حقائق منظر عام لانے کا ٹاسک حوالہ کیا۔ تفتیشی ٹیم نے مختلف زاویوں پر تفتیش شروع کرتے ہوئے اصل ملزم راز محمد ولد حاضر محمد ساکن ضلع مہمند حال کالج روڈ تنگی غلو کلے تک رسائی حاصل کی اور ملزم کو آلہ قتل سمیت گرفتار کیا۔ دوران انٹاروگیشن ملزم نے اپنے جرم کا اعتراف کرتے ہوئے بتایا کہ وقوعہ سے ایک دن پہلے مقتول اور میں دونوں چرس پی رہے تھے اس دوران مقتول سے میری زبانی تکرار شروع ہوئی اور اس کے ساتھ لڑائی ہوئی۔ رات کو طیش میں آکر مقتول کو لکڑی کی وار سے سر پر مار کر قتل کیا۔ مزید تفتیش جاری ہے۔

مزید :

پشاورصفحہ آخر -