محض نیب تفتیشی افسر کی خواہش پر کام نہیں چلے گا،لاہورہائیکورٹ نے محسن شاہ نواز رانجھا کی طلبی کیخلاف درخواست پر سینئرپراسیکیوٹر نیب کو طلب کرلیا

محض نیب تفتیشی افسر کی خواہش پر کام نہیں چلے گا،لاہورہائیکورٹ نے محسن شاہ ...
محض نیب تفتیشی افسر کی خواہش پر کام نہیں چلے گا،لاہورہائیکورٹ نے محسن شاہ نواز رانجھا کی طلبی کیخلاف درخواست پر سینئرپراسیکیوٹر نیب کو طلب کرلیا

  

لاہور(ڈیلی پاکستان آن لائن)لاہورہائیکورٹ نے محسن شاہ نواز رانجھا کی آمدن سے زائد اثاثوں کے الزام میں انکوائری میں طلبی کیخلاف درخواست پرنیب کے سینئر پراسیکیوٹر کو انکوائری کی تصدیق کی سطح پر 12 اگست کو طلب کرلیا۔عدالت نے ریمارکس دیتے ہوئے کہاکہ محض نیب تفتیشی افسر کی خواہش پر کام نہیں چلے گا،اگردرخواست گزار کیخلاف نیب کے پاس کافی مواد ہے تو ریفرنس دائر کریں ۔

نجی ٹی وی کے مطابق لاہورہائیکورٹ میں مسلم لیگ ن کے رہنما محسن شاہ نواز رانجھا کی آمدن سے زائد اثاثوں کے الزام میں نیب انکوائری میں طلبی کیخلاف درخواست پر سماعت ہوئی،نیب وکیل نے کہاکہ نیب نے درخواست گزار کو صرف کمپلینٹ کی تصدیق کیلئے طلب کیا ۔

عدالت نے ریمارکس دیتے ہوئے کہاکہ اگرآپ کے پاس مواد ہے تو اس کو انکوائری میں تبدیل کردیں،دیکھنا ہے کہ نیب کے دیئے گئے نوٹس کی قانونی حیثیت کیا ہے ۔

عدالت نے کہا کہ محض نیب تفتیشی افسر کی خواہش پر کام نہیں چلے گا،اگردرخواست گزار کیخلاف نیب کے پاس کافی مواد ہے تو ریفرنس دائر کریں ،عدالت نے نیب کے سینئر پراسیکیوٹر کو انکوائری کی تصدیق کی سطح پر 12 اگست کو طلب کرلیا۔

مزید :

قومی -علاقائی -پنجاب -لاہور -