کوٹ لکھپت، پولیس پر حملہ، زیر حراست ملزم اپنے ہی ساتھیوں کی فائرنگ سے ہلاک 

کوٹ لکھپت، پولیس پر حملہ، زیر حراست ملزم اپنے ہی ساتھیوں کی فائرنگ سے ہلاک 

  

 لاہور(کرائم رپورٹر)  سی آئی اے پولیس نے کوٹ لکھپت کے علاقے میں پولیس مقابلے کے دوران زیرحراست ملزم فاروق ڈار ہلاک،پولیس کے مطابق فاروق ڈار کو دو روز قبل ریلوے اسٹیشن سے گرفتار کیا گیا تھا ملزم کو نشاندہی کیلئے لے جایا جا رہا تھا کہ اس کے نامعلوم ساتھیوں نے اسے چھڑانے کے لیے پولیس پر حملہ کر دیا اس دوران زیر حراست ملزم فاروق ڈار اپنے ہی ساتھیوں کی فائرنگ کے زد میں آکر موقع پر ہلاک ہو گیا جبکہ اس کے ساتھی موقع سے فرار ہو نے میں کامیاب ہو گئے خوش قسمتی سے پولیس اہلکار معجزانہ طور پر فائرنگ سے محفوظ رہے پولیس نے مرنے والے شوٹر کی نعش پوسٹ مارٹم کے لیے منتقل کر کے انسپکٹر فاروق اصغر اعوان کی مدعیت میں پولیس مقابلے سمیت دیگر سنگین دفعات کے تحت مقدمہ درج کر کے فرار ہونے والے ساتھیوں کی تلاش شروع کر دیا پولیس کے مطابق مطابق چوہنگ ے رہائشی ملزم پر الزام ہے کہ اس نے مریدکے، گوجرانوالہ، گجرات اور ڈسکہ میں متعدد افراد کو قتل کیا جب کہ کراچی، سکھر اور ساہیوال میں بھی کئی افراد کو پیسے لے کر قتل کیا ملزم فاروق ڈار سکھر میں بہت عرصہ چھپا رہا جبکہ ملزم سری لنکن پولیس اور انٹرپول کو بھی مطلوب تھاکیونکہ اس نے سری لنکا میں انسپکٹر زاہد پہلوان کے سب سے بڑے دشمن کو قتل کیا تھا جبکہ ملزم ضلع کچہری لوئر مال کے قریب بھی ایک شخص کو پیسے لے کر قتل کر چکا تھا۔

مزید :

علاقائی -