شرپسند عناصر کے خاتمہ کیلئے امت مسلمہ کو اتحاد کامظاہرہ کرنا ہوگا: مقررین 

  شرپسند عناصر کے خاتمہ کیلئے امت مسلمہ کو اتحاد کامظاہرہ کرنا ہوگا: مقررین 

  

    لاہور(فلم رپورٹر) ادارہ منہاج الحسین اور تحریک حسینیہ پاکستان کے زیراہتمام ہونیوالی ساتویں سالانہ”حسینیہ اتحاد امت کانفرنس“میں کہاگیا ہے کہ بانیان مجالس، عزادار مجالس اور جلوسوں کے تمام پروگرامز میں حکومت کے طے شدہ ضابطہ اخلاق اور پیغام پاکستان کے اصولوں کی پابندی کریں اور ایک دوسرے کے جذبات مجروح کرنے سے گریز کریں۔ اپنے عقیدے کو مثبت انداز میں پیش کریں، مناظرہ، مشاجرہ اور مطاعن بیان کرنے سے اجتناب کیا جائے۔ کانفرنس کی صدارت تحریک حسینیہ پاکستان کے سربراہ اور رکن اسلامی نظریاتی کونسل اور متحدہ علماء بورڈ پنجاب علامہ ڈاکٹر محمد حسین اکبر نے کی، جبکہ علامہ سید افتخار حسین نقوی، پیر یاور عباس بخاری، صوبائی وزیر پیر سید سعید الحسن، شاہنواز رانا اور رانا مقبول احمد سمیت دیگر رہنماوں، علماء و مشائخ اور زعماء، ذاکرین، واعظین، خطباء، بانیان مجالس اور عزاداروں نے شرکت و خطاب کیا۔ مقررین نے اتحاد امت پر زور دیتے ہوئے کہا کہ محرم الحرام سے قبل شرپسند عناصر ایسا ماحول بنانے کی کوشش کرتے ہیں، جس سے امن عامہ کا مسئلہ پیدا ہو اور فرقہ واریت کو ہوا ملے۔ امت کو وحدت و بھائی چارے کا مظاہرہ کرنا ہوگا، اتحاد کی قوت سے ہی امن دشمنوں کو شکست دی جا سکتی ہے۔علامہ ڈاکٹر محمد حسین اکبر کا اپنے خطاب میں کہنا تھا کہ ایک دوسرے کے مقدسات کا احترام کریں، متنازع تقریریں کرنیوالے افراد کو سٹیج سے دور رکھا جائے۔ انہوں نے کہا کہ چند سالوں سے وطن عزیز کے مختلف علاقوں میں آئمہ معصومین علیہم السلام اور ان کی مادران گرامی علیھم السلام کیخلاف جن گستاخوں نے توہین آمیز اور بازاری زبان استعمال کی ہے، ان میں سے کئی ایک کیخلاف ایف آئی آر کاٹی جا چکی ہیں، کچھ ان میں سے گرفتار ہیں، لیکن ان کو ابھی تک کیفر کردار تک نہیں پہنچایا گیا اور ان کے مقدمات کو آگے بڑھانے میں روایتی سستی یا بددیانتی کا مظاہرہ کیا جا رہا ہے۔انہوں نے کہا کہ حکومت کے قومی و صوبائی متعلقہ ذمہ دار اداروں کی سستی کی مذمت کرتے ہوئے مطالبہ کرتے ہیں کہ محرم الحرام سے پہلے پہلے ان گستاخوں کو کیفر کردار تک پہنچایا جائے۔ اس موقع پر شاہنوازرانا نے ہدیہ نعت بھی پیش کیا۔

مزید :

میٹروپولیٹن 1 -