نور مقدم قتل کیس، ملزم ظاہر جعفرنے اعتراف جرم کرلیا: مزید دور وزہ جسمانی ریمانڈ منظور 

نور مقدم قتل کیس، ملزم ظاہر جعفرنے اعتراف جرم کرلیا: مزید دور وزہ جسمانی ...

  

اسلام آباد(مانیٹرنگ ڈیسک) نور مقدم قتل کیس میں اہم پیشرفت سامنے آئی ہے، ملزم ظاہر جعفر نے نور کو قتل کرنے کا اعتراف کر لیا ہے۔ذرائع کا کہنا ہے کہ ملزم قتل کی وجوہات کبھی کچھ بتاتا ہے تو کبھی کچھ۔ پولیس نے نور پر تشدد کے ویڈیو شواہد بھی حاصل کر لئے۔ نور مقدم ساڑھے چار بجے بالکنی سے بھاگ کر گارڈ کے پاس آئی۔ نور نے اپنے آپ کو سکیورٹی گارڈ کے کیبن میں بند کر لیا۔ذرائع کے مطابق ملزم ظاہر جعفر پیچھے آیا اور کیبن سے نور کو باہر نکالا۔ گلی میں موجود گارڈ یہ سب کچھ دیکھتے رہے۔ کسی بھی گارڈ نے ظاہر جعفر کو تشدد کرنے سے نہ روکا۔ گلی میں اور بھی لوگ موجود تھے جنہوں نے نور کو گھسٹتے ہوئے دیکھا۔ذرائع کا کہنا ہے کہ ویڈیو میں یہ بھی دیکھا جا سکتا ہے کہ کس طرح ملزم اس کو دوبارہ اوپر لیکر گیا۔ تشدد سے لیکر قتل تک کا عمل تین گھنٹے کے دوران کیا گیا۔ عدالت نے نور مقدم قتل کیس کے مرکزی ملزم ظاہر جعفر کا مزید دو روزہ جسمانی ریمانڈ منظور کرلیا،عدالت نے پولیس کو ملزم سے تفتیش کرکے 28 جولائی کو دوبارہ پیش کرنے کا حکم دے دیا۔  تفصیلات کے مطابق  تھانہ کوہسار پولیس نے نور مقدم قتل کیس کے مرکزی ملزم ظاہر جعفر کو دو روزہ جسمانی ریمانڈ مکمل ہونے پر اسلام آباد کچہری میں ڈیوٹی مجسٹریٹ صہیب بلال رانجھا کے سامنے پیش کیا،  ملزم کو سخت سیکورٹی میں عدالت لایا گیا۔ سرکاری وکیل ساجد چیمہ کا کہنا تھا کہ ملزم ظاہر جعفر سے پسٹل ریکور کرلیا گیا ہے، اب اس سے موبائل ریکور کرنا ہے۔ لہذا عدالت ملزم کا مزید جسمانی ریمانڈ منظور کرے۔ ملزم نے عدالت کے سامنے انگریزی زبان میں کہا کہ میں سن نہیں سکتا۔ جس پر عدالت نے ملزم کو روسٹرم پر لانے کی ہدایت کی۔ ملزم کے وکیل نے عدالت کے سامنے مقف پیش کیا کہ پولیس نے ملزم سے جو ریکوری کرنی تھی کر چکے، اب مزید جسمانی ریمانڈ نہ دیا جائے، کوئی قانونی پوائنٹ بھی نہیں کہ ملزم کا مزید جسمانی ریمانڈ دیا جائے۔ مقتولہ کے والد شوکت مقدم کے وکیل شاہ خاور نے بھی عدالت کے سامنے ملزم کے مزید جسمانی ریمانڈ کی حمایت کرتے ہوئے عدالت کو مقف دیا کہ کیس میں مزید دفعات لگی ہیں، شریک ملزمان بھی گرفتار ہوئے، عدالت ملزم کا مزید جسمانی ریمانڈ منظور کرے۔ عدالت نے پولیس کی استدعا پر ملزم ظاہر جعفر کا دو روزہ جسمانی ریمانڈ منظور کر لیا، عدالت نے پولیس کو ملزم سے تفتیش کرکے 28 جولائی کو دوبارہ پیش کرنے کا حکم دیتے ہوئے کیس کی سماعت ملتوی کردی۔

نور مقدم کیس

مزید :

صفحہ آخر -