صیدا میں فرقہ وارانہ فسادات کا منصوبہ حزب اللہ نے تیار کیا تھا،سابق لبنا نی وزیر اعظم

صیدا میں فرقہ وارانہ فسادات کا منصوبہ حزب اللہ نے تیار کیا تھا،سابق لبنا ...

  

       بیر وت(آن لائن)لبنان کے سابق وزیراعظم فواد سنیورہ نے جنوبی شہر صیدا میں پیش آنے والے پ±رتشدد واقعات کی ذمہ داری شیعہ ملیشیا حزب اللہ پرعائد کی ہے۔ ان کا کہنا ہے کہ صیدا میں فرقہ وارانہ لڑائی کے دوران اگر لبنان کے کسی مسلح گروپ نے بڑھ چڑھ کر حصہ لیا ہے تو وہ حزب اللہ ہے۔

حزب اللہ کی اس لڑائی کا مقصد راسخ العقیدہ س±نی عالم دین شیخ احمد الاسیر اور ان کے گروپ کو کاری ضرب لگانا تھا۔بیروت میں اپنے ایک بیان میں سابق وزیراعظم کا کہنا تھا کہ "پچھلے چند روز کے اخبارات کا مطالعہ کرنے سے یہ بات عیاں ہو جاتی ہے کہ صیدا میں کشیدگی کا منصوبہ حزب اللہ نے تیار کیا تھا تا کہ شیخ احمد الاسیر کو جوابی لڑائی کے لیے مجبور کیا جائے۔ اس ضمن میں شیخ اسیر اور ان کے گروپ سے بھی فاش غلطیاں سرزد ہوئی ہیں جس سے شہرمیں فرقہ وارانہ کشیدگی پرجلتی کا کام کیا"۔

مزید :

عالمی منظر -