صوبائی وزیر صحت کا چھاپہ، غیر قانونی ری سائیکلنگ فیکٹری پکڑی گئی

صوبائی وزیر صحت کا چھاپہ، غیر قانونی ری سائیکلنگ فیکٹری پکڑی گئی

  

      لاہور (جنرل رپورٹر) صوبائی وزیر صحت نے داروغہ والا کے علاقے میں ایک بڑی عمارت پر چھاپہ مار کر غیر قانونی ری سائیکلنگ کی فیکٹری پکڑ لی، فیکٹری میں ٹنوں کے حساب سے ہسپتال سے چوری کیا گیا خطرناک ترین سامان کی شکل میں ویسٹ پکڑ لی چھاپے کے بعد وزیر صحت خلیل طاہر سندھو نے ای ڈی او ہیلتھ، ڈی او ہیلتھ، ڈی او ماحولیات کو موقع پر طلب کرلیا اور نااہل برتنے پر ان کی شدید الفاظ میں سرزنش کی فیکٹری میں گودام کے گودام ہسپتالوں سے ضائع شدہ خون آلودہ سرنجوں، بلڈ بیگ، یورن بیگ، ڈراپس بھی پکڑ لئے گئے ہیں جس پر وزیر صحت نے کہا کہ ای ڈی او ہیلتھ ڈی او ہیلتھ اور ڈسٹرکٹ آفیسر ماحولیات اور ان کے عملے کہاں سو رہے ہیں۔ انہوں نے آنکھوں پر چمک کی پٹی باندھ رکھی ہے اور لوگ مر رہے ہیں۔ وزیر صحت نے انہیں موقع پر طلب کرکے فیکٹری سیل کردی اور ذمہ داروں کے یقین کے لئے کمیٹی بنا کر 48 گھنٹوں میں رپورٹ پیش کرنے کا حکم دیا۔ گزشتہ روز وزیر صحت خلیل طاہر سندھو اپنی ٹیم کے ہمراہ داروغہ والا پہنچ گئے جہاں انہیں ایک عمارت نما فیکٹری پر چھاپہ مار کر ہسپتالوں سے چوری یا خریدا گیا ضاع شدہ مال پکڑ لی تھیں وزیر صحت کے چھاپے پر انہیں بتایا گیا کہ یہ ڈسٹرکٹ آفیسر ماحولیات ڈپٹی آفیسر ماحولیات اور ڈسٹرکٹ آفیسر صحت کی ذمہ داری میں آتا ہے۔ انہوں نے ایکشن نہیں لیا جس پر ان کے خلاف کارروائی ضرور ہوگی۔

مزید :

صفحہ آخر -