سوئس مقدمات، خط کو رائی کا پہاڑ بنایا گیا: اعتزاز احسن

سوئس مقدمات، خط کو رائی کا پہاڑ بنایا گیا: اعتزاز احسن
سوئس مقدمات، خط کو رائی کا پہاڑ بنایا گیا: اعتزاز احسن

  

اسلام آباد (مانیٹر نگ ڈیسک) سپریم کورٹ بار کے سابق صدر بیر سٹر اعتزاز احسن نے کہا ہے کہ دوسرا خط حکومت پاکستان نے سوئس حکومت کو نہیں بلکہ اپنے وکیل کو لکھا تھاجس میں بتایا گیا تھا کہ پہلا خط جو سوئس حکام کو لکھاگیاہے اس پر ہم کو یہ تحفظات ہیںاور ہماری پوزیشن اس پر یہ ہے ۔ انہوں نے کہا کہ جو خط آدمی اپنے وکیل کو لکھتا ہے اس خط کو عدالت دیکھ ہی نہیں سکتی کیونکہ وکیل کو اپنی کمزوریاں بھی بتائی جاسکتی ہیں اور اس پر کوئی چھوٹی سے چھوٹی یا بڑی عدالت کوئی ایکشن نہیں لے سکتی ۔ دنیا نیوز کے پروگرام”ٹاپ سٹوری “میں گفتگو کرتے ہو ئے انہوں نے کہا کہ حکومت اپنے تحفظات سوئس حکومت کو بھی بتا سکتی تھی کیو نکہ سپریم کورٹ کو اس پر کوئی تحفظات نہیں تھے ۔ انہوں نے کہا کہ وزارت قانون کی جانب سے اپنے وکیل کو لکھے جانے والے خط کوجس کا وہ حق رکھتی تھی، رائی کا پہاڑ بنا دیا گیا ہے اور اس پر یہی کہا جا سکتاہے کہ کھودا پہا ڑاور نکلااس پر اب میں کیا کہوں؟

مزید :

اسلام آباد -