کیا کوئی ماں ایسا بھی کرسکتی ہے ؟ماں کا اپنی ہی بچی کے ساتھ ایسا خوفناک سلوک کہ کسی کو یقین نہ آئے

کیا کوئی ماں ایسا بھی کرسکتی ہے ؟ماں کا اپنی ہی بچی کے ساتھ ایسا خوفناک سلوک ...
کیا کوئی ماں ایسا بھی کرسکتی ہے ؟ماں کا اپنی ہی بچی کے ساتھ ایسا خوفناک سلوک کہ کسی کو یقین نہ آئے

  

نئی دلی (نیوز ڈیسک) ماں اپنے بچوں کیلئے لا متناہی محبت کا دوسرا نام ہے لیکن بھارت میں ایک ماں نے اپنی ہی معصوم بچی کے سر کی جلد کاٹ کر اس کا گوشت کھالیا۔

اخبار ”ہندوستان ٹائمز“ کے مطابق 42 سالہ پرامیلا منڈل کو اس کے دیور ڈبلونے اپنی ہی بچی کا گوشت کھاتے دیکھ کر شور مچایا جس پر اردگرد کے لوگ بھی موقع پر پہنچ گئے اور بچی کو اس کی ماں سے بچایا۔ خاتون کو وحشیانہ فعل میں مصروف دیکھنے والے شخص ڈبلو کی اہلیہ نے بتایا کہ وہ گوپال پور گاﺅں کے رہائشی ہیں۔ اس کا کہنا تھا کہ جب اس کا خاوند ننھی بچی بھراتی کی چیخیں سن کر گھر میں داخل ہوا تو اس کی ماں نے اسے اپنی گود میں دبوچ رکھا تھا اور اس کے سر سے گوشت نوچ نوچ کر کھارہی تھی۔ خاتون نے بتایا کہ بچی کے سر سے خون جاری تھا اور وہ درد سے تڑپ رہی تھی۔ بچی کو اس کی ماں کی قید سے چھڑوا کر فوری طور پر مالدا میڈیکل ہسپتال لے جایا گیا جہاں اسکا علاج جاری ہے۔ بچی پر ظلم کی خبر سن کر گاﺅں والے جمع ہوگئے اور کچھ افراد نے پرامیلا پر تشدد بھی کیا۔ خاتون کے قریبی عزیزوں اور اردگرد کے افراد نے میڈیا کو بتایا کہ وہ نشے کی عادی ہے اور واقعہ کے روز بھی شراب نوشی کرتی رہی تھی۔

پولیس نے واقعہ کی اطلاع ملنے پر موقع پر پہنچ کر خاتون کو ہجوم سے آزاد کروایا اور حراست میں لے لیا۔ اس کے خلاف قانونی کارروائی جاری ہے۔

مزید :

انسانی حقوق -