تنظم اتحاد امت کے زیر اہتمام یوم انسداد ناجائز منافع خوری منایا گیا

تنظم اتحاد امت کے زیر اہتمام یوم انسداد ناجائز منافع خوری منایا گیا

  

لاہور(خبر نگار خصوصی)تنظیم اتحاد امت پاکستان کے زیر اہتمام50سے زائد مفتیان کرام کے شرعی اعلامیہ کی تائید میں چاروں صوبوں ،آزاد کشمیر اور گلگت بلتستان ’’یوم انسداد ناجائز منافع خوری‘‘ منایا گیااس سلسلہ میں ملک بھر کی مساجد میں ’’اسلام میں ناجائز منافع خوری کی ممانعت اورملاوٹ ذخیرہ اندوزی کی شرعی سزا‘‘کے موضوع پر خطبات جمعہ دئیے گئے اور جمعہ کے اجتماعات میں مصنوعی مہنگائی ناجائز منافع خوری ،ملاوٹ اورذخیرہ اندوزی کے خلاف مذمتی قراردادیں منظور کی گئیں۔اس موقع پر چیئرمین تنظیم اتحاد امت پاکستان محمد ضیاء الحق نقشبندی نے جمعہ کے اجتماع سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ اسلام نے ناجائز منافع خوری کو بدترین گناہ قرار دیاہے اس لئے تاجر اور دکان دار رمضان المبارک میں اشیائے ضروریہ کی قیمتوں میں ہوشربا اضافہ کر کے خلق خدا کو عذاب میں مبتلا نہ کریں ناجائز منافع خوری کا ارتکاب کرنے والے رمضان کی رحمتوں اور برکتوں سے محروم رہتے ہیں جامع مسجد دالگراں چوک میں علامہ محمد راغب حسین نعیمی نے خطاب کرتے ہوئے کہاکہ تجارت جیسے مقدس پیشے کو لالچی تاجروں نے بدنام کیا ہے ،اسلام نے ناجائز منافع خوری سے منع کیا ہے ۔جامع مسجد داتا دربار میں علامہ مفتی محمد رمضان سیالوی نے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ ناجائز منافع خوری کو روکنے کے لیے حکومتی اقدامات قابل قدر ہیں عوامی شعور کے بغیر مہنگائی پر کنٹرول کرنا مشکل کام ہے ۔علامہ محمد نعیم جاوید نوری نے جامع مسجد فیضان رسول شام نگر لاہور میں جمعہ کے اجتماع سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ رمضان المبارک کو دولت سازی کا ذریعہ بنانے والے عذاب الٰہی سے بچ نہیں سکیں گے۔مفتی مسعود الرحمن نے جامع مسجد حنفیہ مزنگ لاہور میں خطاب کرتے ہوئے کہا کہ رمضان لمبارک میں ضروریات زندگی کی قیمتیں بڑھانا غیر اسلامی عمل ہے ۔مفتی محمد عمران حنفی نے جامع مسجد حنفیہ شاد باغ میں خطاب کرتے ہوئے کہا کہ تاجر حضرات خدا کا خوف کریں اور روزے داروں کی تکلیف کا سبب نہ بنیں ۔مفتی محمد ابو بکر اعوان ایڈووکیٹ۔مفتی محمد حسیب قادری نے ،پیر سید کرامت علی حسین، علامہ حافظ محمد یعقوب فریدی ، صاحبزادہ محمد عثمان جلالی ، مفتی گلزار احمد نعیمی ، علامہ شمس الرحمن شمس ، پیر خالد سلطان ، مفتی جمیل احمد نعیمی نے بھی مختلف شہروں میں خطاب کئے ۔

مزید :

میٹروپولیٹن 1 -