جعلی ڈگری سکینڈل ،شعیب شیخ سمیت پانچ ملزم سات روزہ جسمانی ریمانڈ پر ایف آئی اے کے حوالے

جعلی ڈگری سکینڈل ،شعیب شیخ سمیت پانچ ملزم سات روزہ جسمانی ریمانڈ پر ایف آئی ...

  

اسلام آباد( آئی این پی )اسلام آباد کی مقامی عدالت نے جعلی ڈگری سکینڈل میں شعیب شیخ سمیت پانچ ملزمان کو سات روزہ جسمانی ریمانڈ پر ایف آئی اے کے حوالے کر دیا۔اسلام آباد کے سینئر سول جج عبدالغفور کاکڑ نے شعیب شیخ کے جسمانی ریمانڈ کے حصول کیلئے وفاقی تحقیقاتی ادارے کی درخواست پر سماعت کی،،، شعیب شیخ، وقاص ستی، ذیشان انور، ذیشان احمد، صابر نامی ملزمان کو عدالت میں پیش کیا گیا،،، ایف آئی اے کی جانب سے موقف اختیار کیا گیا کہ ایگزیکٹ جعلی ڈگریوں کا کاروبار کرتی تھی، منی لانڈرنگ کی تحقیقات کرنا ہیں،ملزمان کا زیادہ سے زیادہ جسمانی ریمانڈ منظور کیا جائے،،، شعیب شیخ کے وکیل نے کہا کہ چارٹرڈ یونیورسٹی کا امریکہ میں کوئی تصور نہیں، وہاں صرف بزنس لائسنس ملتا ہے جس کے بعد یونیورسٹی کھولی جا سکتی ہے، ایگزیکٹ ایک سہولت کار کے طور پر خدمات سرانجام دیتی ہے، ایگزیکٹ کا مرکزی دفتر اور تمام بینک اکاؤنٹس کراچی میں ہیں، سارا ریکارڈ قبضے میں لیا جا چکا ہے، تمام الزامات کی کراچی میں تفتیش ہو چکی ہے، اسلام آباد میں نئے سرے سے تحقیقات کی کوئی ضرورت نہیں، ایف آئی اے اس کیس کو طوالت دینا چاہتا ہے۔ عدالت نے ایگزیکٹ کمپنی کے سی ای او شعیب شیخ سمیت پانچوں ملزمان کو سات روزہ جسمانی ریمانڈ پر ایف آئی اے کے حوالے کر دیا۔ عدالت سے واپسی پر ملزمان کا پمز ہسپتال سے طبی معائنہ کرایا گیا

مزید :

صفحہ اول -