فیصل آباد،صاحبزادہ حامد رضا قاتلانہ حملے میں بال بال بچ گئے

فیصل آباد،صاحبزادہ حامد رضا قاتلانہ حملے میں بال بال بچ گئے

  

فیصل آباد) بیورورپورٹ( سنی اتحاد کونسل کے چیئرمین صاحبزادہ حامد رضا قاتلانہ حملے میں بال بال بچ گئے ان پر نامعلوم موٹر سائیکل سوار نے اس وقت فائرنگ کر دی جبکہ وہ افطار پارٹی سے واپس گھر آ رہے تھے تفصیلات کے مطابق صاحبزادہ حامد رضا اپنے چھوٹے بھائی صاحبزادہ حسن رضا اور گن مین کے ہمراہ چنیوٹ کے علاقہ بھوانہ روڈ سے افطاری کے بعد فیصل آباد آ رہے تھے کہ چوکی لنگرانہ کے قریب ان کی بلٹ پروف گاڑی پر فائرنگ ہو گئی، صاحبزادہ حامد رضا گاڑی خود ڈرائیو کر رہے تھے انہوں نے روزنامہ پاکستان سے گفتگو کرتے ہوئے بتایا کہ ڈرائیور سائیڈ پر تین گولیاں لگیں جو بلٹ پروف ہونے کی وجہ سے ان تک نہ پہنچ سکیں جبکہ گاڑی لڑ کھڑانے اور بے قابو ہونے کی وجہ سے ان کے کندھے اور گردن پر معمولی چوٹیں لگیں تاہم نامعلوم حملہ آور فائرنگ کے بعد فرار ہونے میں کامیاب ہو گئے، صاحبزادہ حامد رضا نے بتایا کہ پندرہ دن قبل لشکر جھنگوی کی طرف سے قاتلانہ دھمکی بھی موصول ہوئی تھی جس پر میں نے حکومت کو آگاہ کیا مگر مجھے تحفظ دینے کی بجائے انتظامیہ نے میری سیکورٹی واپس لے رکھی ہے، صاحبزادہ حامد رضا سابق صوبائی وزیرچیئرمین علماء بورڈ پنجاب صاحبزادہ فضل کریم مرحوم کے بڑے بیٹے ہیں ۔

مزید :

صفحہ اول -