پاکستان میں امن وامان کے قیام کیلئے بھارت کو افغانستان سے نکالنا ہوگا،حافظ سعید

پاکستان میں امن وامان کے قیام کیلئے بھارت کو افغانستان سے نکالنا ہوگا،حافظ ...

 لاہور( نمائندہ خصوصی) امیر جماعۃالدعوۃ حافظ محمد سعید نے کہا ہے کہ پاکستان میں امن و امان کے قیام کیلئے بھارت کو افغانستان سے نکالنا بہت ضروری ہے۔ وطن عزیز کے خلاف ہونے والی تمام سازشوں اور تخریب کاری میں ہندوستان ملوث ہے۔ انڈونیشیا میں برما کے مسلمانوں کیلئے تین سو شیلٹر تعمیر کر رہے ہیں۔ روزانہ 3600برمی مہاجرین کے سحروافطار کا بندوبست کیا جارہا ہے۔ زلزلہ، سیلاب اور کسی قسم کی ہنگامی صورتحال سے نمٹنے کے پیش نظر ملک بھر میں ریسکیو کی تربیت حاصل کرنے والے ایک لاکھ سے زائد رضاکارموجود ہیں۔ گوجرانوالہ کی طرح پورے ملک میں ریسکیو سنٹر قائم کر رہے ہیں۔تھرپارکرسندھ اور بلوچستان میں کروڑوں روپے مالیت کے واٹر پروجیکٹ زیر تعمیر ہیں۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے مرکز اقصیٰ گوجرانوالہ میں نماز جمعہ کے ایک بڑے اجتماع اور بعد ازاں فلاح انسانیت فاؤنڈیشن کے واٹر ریسکیو سنٹر کی افتتاحی تقریب کے موقع پر میڈیا سے خصوصی گفتگو کرتے ہوئے کیا۔ بعد ازاں انہوں نے جماعۃالدعوۃ گوجرانوالہ کے مسؤل مولانا رمضان منظور و دیگر کے ہمراہ موٹر بوٹ میں بیٹھ کرگوجرانوالہ نہر میں واٹر ریسکیو کی عملی مشق کا جائزہ لیا۔ اس دوران جی ٹی روڈ پر نہر کے پل اور دونوں اطراف میں موجود ہزاروں افراد کی جانب سے نعرہ تکبیر اللہ اکبر اور فلاح انسانیت فاؤنڈیشن زندہ باد کے زبردست نعرے لگائے۔ افتتاح کے موقع پر فلاح انسانیت فاؤنڈیشن کے سٹال پر کسی بھی ہنگامی صورتحال سے نمٹنے کیلئے واٹر بوٹس اور آگ بجھانے والے آلات سمیت دیگر امدادی سامان اور ایف آئی ایف کے رضاکاروں کی بڑی تعداد موجود تھی۔ قبل ازیں ہزاروں مردوخواتین نے حافظ محمد سعید کی امامت میں نماز جمعہ ادا کی۔ خواتین کیلئے الگ سے پردہ کے انتظامات کئے گئے تھے۔ جماعۃالدعوۃ کے سربراہ حافظ محمد سعید نے اپنے خطاب میں کہاکہ پاکستان بہت دیر سے سازشوں کا گڑھ بنا ہوا ہے۔ انڈیا افغانستان میں بیٹھ کر پاکستان کو میدان جنگ بنانے کی کوششیں کر رہا ہے۔ اب تو آرمی چیف اور وزارت خارجہ کے ذمہ داران نے بھی واضح طور پر بھارتی سازشوں کو بے نقاب کر دیا ہے انہوں نے کہاکہ امریکہ اور اس کے اتحادیوں کی جانب سے عراق و افغانستان میں دس لاکھ سے زائد مسلمانوں کا قتل عام کیاگیا۔ اب برما میں نہتے مسلمانوں پر ظلم وستم کے پہاڑ توڑے جا رہے ہیں مگر بین الاقوامی اداروں نے مکمل خاموشی اختیار کر رکھی ہے ان سے کسی خیر کی توقع نہیں رکھی جا سکتی۔ برما اور کشمیر کے مسلمانوں کے مسائل کے حل میں ان کی کوئی دلچسپی نہیں ہے یہ ہمیشہ نقصان پہنچانے کیلئے آتے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ برما، کشمیر و دیگر علاقوں میں اسی بنیاد پر مظالم ڈھائے جا رہے ہیں اور مسلم خواتین کی عزتیں پامال کی جا رہی ہیں۔کشمیر، برما اور غزہ سمیت ہر جگہ مسلمانوں پر مظالم ڈھائے جا رہے ہیں۔ قرآنی تعلیمات پر عمل کئے بغیر مسلمانوں کے مسائل حل نہیں ہوں گے۔

حافظ سعید

مزید : صفحہ آخر