متحدہ کے ساتھ لاکھوں عوام ہیں، پابندی نہیں لگ سکتی: محمد انور

متحدہ کے ساتھ لاکھوں عوام ہیں، پابندی نہیں لگ سکتی: محمد انور
متحدہ کے ساتھ لاکھوں عوام ہیں، پابندی نہیں لگ سکتی: محمد انور

  

لاہور (ویب ڈیسک) ایم کیو ایم کے رہنما محمد انور نے کہا ہے کہ حکومت کی طرف سے برطانوی حکام کو لکھے گئے خط سے ہمیں کوئی پریشانی نہیں ہے۔ ہم ہر قسم کی تحقیقات میں تعاون کریں گے۔ ایم کیو ایم کے خلاف الزامات نئے نہیں ہیں۔ مقامی چینل ایکسپریس کے پروگرام میں گفتگو میں انہوں نے کہا کہ پاکستان حکومت نے برطانوی حکام کو خط لکھا ہے ہم اس کو ویلکم کرتے ہیں۔ ایم کیو ایم ہر قسم کی تحقیقات میں تعاون کرے گی۔ ہم خود بھی چاہتے ہیں کہ عمران فاروق کے قتل کی تحقیقات جلد مکمل ہوں اور مجرم کو سزا ملے۔ اپوزیشن اور میڈیا کی خواہش کا ضرور ہے کہ ایم کیو ایم پر پابندی لگائی جائے لیکن جس کے ساتھ لاکھوں عوام ہوں اس پر پابندی نہیں لگائی جاسکتی۔ شاہ محمود قریشی نے کہا کہ حکومت کے وعدوں کی قلعی رمضان میں کھل گئی ہے۔ حکومت نے وعدے کئے کہ ہم بجلی کا بحران ختم کریں گے لیکن ایسا نہیں ہوا۔ پی ٹی آئی نے سارے پاکستان میں لوڈشیڈنگ کے خلاف احتجاج کیا اور ہم شدید گرمی اور روزے میں احتجاج کرنے والوں کے مشکور ہیں جنہوں نے ہمارا ساتھ دیا۔ کراچی میں صف ماتم بچھی ہے۔ حکومت کی بے حسی دیکھیں کہ کراچی کا مینڈیٹ جن لوگوں کے پاس ہے وہ ملک سے فرار ہوگئے ہیں۔ خواجہ آصف کے استعفے سے مسئلہ حل نہیں ہوگا ان سے استعفیٰ اس لئے مانگا جارہا ہے کہ وہ اپنے وعدے پورے نہیں کرسکے۔ اس کے علاوہ وہ ٹائم نہیں دے پارہے کیونکہ ان کے پاس دوسری اہم وزارت بھی ہے۔ ہم نے ان سے کہا ہے کہ ن لیگ کے پاس اور بہت سمجھدار لوگ موجود ہیں ان کو موقع دینا چاہیے۔ تجزیہ کار صابر شاہ نے کہا کہ ایگزیکٹ اور ایم کیو ایم میں بہت فرق ہے۔ ایم کیو ایم کراچی میں سٹیک ہولڈر ہے۔ وزیر داخلہ چودھری نثار نے خط برطانوی حکومت کے ساتھ مشاورت کرکے لکھا ہے۔ برطانوی حکومت بھی سنجیدہ ہے۔ منی لانڈرنگ کا کیس برطانیہ کی اپنی ساکھ کا بھی مسئلہ ہے وہ منی لانڈرنگ کے کیس میں کسی کو نہیں چھوڑتے۔ ایم کیو ایم نے کہا تھا کہ ہم عدالت میں جائیں گے لیکن وہ نہیں گئے جو دال میں کچھ کالا ظاہر کرتا ہے۔ کمشنر کراچی شعیب صدیقی نے کہا کہ کراچی کے والی وارث موجود ہیں۔ کمشنر حکومت کا نمائندہ ہوتا ہے۔ تمام معامالت کو ہم دیکھ رہے ہیں۔ ایڈمنسٹریٹر کو اگر کسی وجہ سے جانا پڑا ہے تو اس وجہ سے کوئی کام نہیں رکے گا۔ کراچی میں موسم کی تبدیلی کی وجہ سے اموات ہوئی ہیں لیکن اب حالات پہلے سے بہتر ہیں۔

مزید :

لاہور -