اگر آپ چینی کھانا چھوڑ دیں تو آپ کے جسم میں کیا تبدیلی آتی ہے؟جواب جان کر آپ کوشش ضرور کریں گے

اگر آپ چینی کھانا چھوڑ دیں تو آپ کے جسم میں کیا تبدیلی آتی ہے؟جواب جان کر ...
اگر آپ چینی کھانا چھوڑ دیں تو آپ کے جسم میں کیا تبدیلی آتی ہے؟جواب جان کر آپ کوشش ضرور کریں گے

  

لندن(نیوزڈیسک)چینی کھاناایک عام سی بات ہے اور ہرانسان اسے ضرور استعمال کرتا ہے لیکن اس کے کھانے سے ہمارے جسم میں بہت سی تبدیلیاں ہوتی ہیں۔جنوری 2011ءمیں سارہ ولسن نامی خاتون نے اس بات کا فیصلہ کیا کہ وہ چینی چھوڑ دے گی۔سارہ کو تھارائیڈ کی بیماری تھی اور اس چیز کودیکھتے ہوئے اس نے ایک تجربہ کیا اور چینی کھانی چھوڑ دی۔اس کے جسم میں کیا تبدیلیاں ہوئیں، اس نے اپنی حال ہی میں لکھی گئی کتاب میں دلچسپ باتیں بتائی ہیں۔آئیے آپ کو ان باتوں سے روشناس کرواتے ہیں۔

خوبصورت جلد

چینی چھوڑنے کے صرف دوہفتوں بعد سارہ نے محسوس کیا کہ اس کی جلد تروتازہ،دانوں سے پاک اور نرم و ملائم ہوگئی۔ماہرین کا کہنا ہے کہ چینی کھانے سے انسانی جلد زیادہ تیزی سے ڈھلتی ہے اور عمر زیادہ نظر آنے لگتی ہے۔

بے وقت بھوک میں کمی

چینی چھوڑنے کے پانچ ہفتوں بعد سارہ کو اس بات کی خوشی ہوئی کہ اب اسے وقت بے وقت بھوک نہ لگتی تھی اور وہ دن میں تین بار کھانا کھاتی تھی۔ماہرین صحت کا کہنا ہے کہ چینی کھانے کی وجہ سے ہمیں زیادہ بھوک لگتی ہے اور ہم زیادہ کھاتے ہیں جس کی وجہ سے وزن بڑھتا ہے۔

وزن میں کمی

چینی چھوڑنے کے صرف چھ ماہ بعد سارہ کے وزن میں 30پاﺅنڈ (13.5کلوگرام) کمی واقع ہوئی۔یہ تمام صرف چینی چھوڑنے سے ممکن ہوا اور اس دوران سے نے کوئی ورزش بھی نہ کی۔

موڈ میں خوشگوار تبدیلی

چینی چھوڑنے کے بعد سارہ کے موڈ میں بہت ہی خوشگوار تبدیلی واقع ہوئی اور اب اسے غصہ بھی کم آتا ہے اور زیادہ وقت وہ خوش رہتی ہے۔چینی چھوڑنے سے قبل سارہ چڑچڑے پن اور بے چینی کا شکار رہتی تھی لیکن چینی چھوڑنے اور غذائیت سے بھرپور کھانا کھانے سے اس کا موڈ خوشگوار رہنے لگا۔

جسمانی درد میں کمی

سارہ کے جوڑوں میں سوزش بھی کم ہوئی اور اس کے جسم کے مختلف اعضاءمیں درد بھی کم ہوگئی۔

اس کا کہنا ہے کہ اگر لوگ تجرباتی طور پر چینی چھوڑ دیں تو انہیں بہت زیادہ افاقہ ہوسکتا ہے اور وہ صحت مند زندگی گزار سکتے ہیں۔

مزید : تعلیم و صحت