حکومت ایسے جھوٹ بولتی ہے کہ سچ لگتا ہے : پرویز الٰہی

حکومت ایسے جھوٹ بولتی ہے کہ سچ لگتا ہے : پرویز الٰہی
حکومت ایسے جھوٹ بولتی ہے کہ سچ لگتا ہے : پرویز الٰہی

  

لاہور ( مانیٹرنگ ڈیسک ) پاکستان مسلم لیگ ق کے رہنماءچوہدری پرویز الٰہی نے کہا ہے مسلم لیگ ن ایسے جھوٹ بولتی ہے کہ وہی جھوٹ سچ لگتا ہے ۔

نجی ٹی وی چینل کو انٹرویو دیتے ہوئے چوہدری پرویز الٰہی کا کہنا تھا کہ حکومت نے لوڈشیڈنگ ختم کرنے کا کوئی وعدہ پورا نہیں کیا بلکہ ان کی حکومت میں نندی پور پراجیکٹ سمیت توانائی کے تمام منصوبے بند پڑے ہیں ۔ انہوں نے مزید کہا کہ حکومت نے چنیوٹ میں ذخائر کی موجودگی کا جھوٹ بولا جس کے بعد حکومت نے ڈیڑھ ارب روپے ضائع کر دیے ۔ مسلم لیگ ق کے رہنماءکا کہنا تھا کہ اس سال بجلی کی پیداوار گزشتہ سال کی نسبت 2.35 فیصد کم ہوئی لیکن حکومت میٹرو بس پراجیکٹ میں عوام کا پیسہ ضائع کرنے میں مصروف تھی ۔ انہوں نے بتایا کہ جنگلہ بس پراجیکٹ بجٹ میں نہیں تھی لیکن اس کے باوجود حکومتی خزانے سے 50 ارب روپے اس منصوبے میں جھونک دیے گئے ۔ پرویز الٰہی کا کہنا تھا کہ حکومت کو چاہیئے تھا کہ میٹرو پر پیسہ خرچ کرنے کی بجائے بجلی کے منصوبے پر لگاتی کیونکہ بجلی بحران اس وقت پاکستان کا بڑا مسئلہ ہے ۔

حکومت کی ناکامیوں کے حوالے سے ان کا کہنا تھا کہ انہوں نے اپنے دور حکومت میں کسانوں کو بہت سہولیات فراہم کیں لیکن مسلم لیگ ن کی حکومت نے کسانوں کے لائیو سٹاک پر بھی ٹیکس لگا دیا ۔ مسلم لیگ ق کے رہنماءکا کہنا تھا کہ حکومت کی بے بسی کا عالم اس وقت بھی نظر آتا ہے جب مسئلہ کشمیر سمیت بھارت کے خلاف صرف آرمی چیف جنرل راحیل شریف ہی بولتے نظر آتے ہیں لیکن حکومت کی جانب سے کوئی وزیر بیان نہیں دیتا ۔ انہوں نے مزید کہا کہ ماڈل ٹاﺅن میں 12 افراد کو قتل کیا گیا جبکہ اس کے بعد اس وقت کے وزیر قانون رانا ثناءاللہ نے استعفیٰ بھی دیا لیکن حیرت کی بات تو یہ ہے کہ انہوں نے پھر سے وزارت قانون کا عہدہ سنبھال لیا ۔ ملکی مسائل کے حوالے سے ان کا کہنا تھا کہ عوام کے بنیادی مسائل کا حل بلدیاتی نظام میں ہے لیکن حکومت انتخابات سے فرار کا راستہ اختیار کر رہی ہے ۔

مزید : لاہور /اہم خبریں