مسلم لیگ (ن) اور تحریک انصاف، ٹکٹوں کی تقسیم پر اختلاف، بعض حلقوں کے نتائج متاثر ہوں گے

مسلم لیگ (ن) اور تحریک انصاف، ٹکٹوں کی تقسیم پر اختلاف، بعض حلقوں کے نتائج ...

راولپنڈی میں بڑی سیاسی جماعتوں تحریک انصاف اور مسلم لیگ ن نے زیادہ ترحلقوں میں ٹکٹوں کی تقسیم مکمل کرلی ہے ،سابق وزیرداخلہ چوہدری نثارعلی خان کے مقابلے میں پہلے مسلم لیگ ن نے اپنے امیدوارکھڑے نہ کرنے کافیصلہ کیا مگر اس کے بعد ان کے مدمقابل ن لیگ کے امیدواروں کو ٹکٹ جاری کردیے گئے جبکہ ٹکٹوں کی تقسیم کے معاملے پر مسلم لیگ ن اور تحریک انصاف میں دھڑے بندی سامنے آرہی ہے ،پاکستان مسلم لیگ (ن) کی جانب سے پی پی 18راولپنڈی سے سابق رکن قومی اسمبلی ملک شکیل اعوان کو ٹکٹ کے اجراء پر مقامی لیگی کارکن ناراض ہوگئے جس سے مسلم لیگ (ن) کو حلقے میں شدید مشکلات کا سامنا ہے،پی پی 18سے ماضی میں منتخب ہونے والے ضیاء اللہ شاہ اور لیگی رہنما حافظ عبداللہ بٹ کے حامیوں نے ملک شکیل اعوان کو ٹکٹ کے اجراء پر احتجاج بھی کیا ہے ۔ رتہ امرال اور اس سے ملحقہ علاقوں کے ووٹرز پی پی18کے الیکشن کے دوران اہم کردار ادا کرتے ہیں،رتہ امرال اور اس سے ملحقہ علاقوں میں شکیل اعوان کی نسبت لیگی رہنما ضیاء اللہ شاہ اورحافظ عبداللہ بٹ کے حامیوں کی اکثریت ہے ،جس سے مسلم لیگ (ن)کو اس حلقے میں غلط امیدوار کو ٹکٹ جاری کرنے پر شکست کا سامنا بھی کرنا پڑ سکتا ہے ،مقامی لیگی قیادت میں اختلافات سے قومی اسمبلی کی نشست پر بھی مسلم لیگ (ن)متاثر ہوسکتی ہے۔ ،دوسری جانب 2013کے عام انتخابات میں پی پی18سے پاکستان تحریک انصاف کے نامزد امیدوار اعجاز خان جازی جیتے تھے ،2013میں مسلم لیگ (ن) کے شہریار ریاض نے ٹکٹ نہ ملنے پر پی ٹی آئی کے امیدوار اعجاز خان جازی کی حمایت کی تھی جسکی وجہ سے اعجاز خان جازی کامیاب ہوئے تھے،چندروزقبل شہریار ریاض نے پاکستان تحریک انصاف میں شمولیت اختیار کر لی ، پہلے پی ٹی آئی نے شہریار ریاض کو پی پی 15راولپنڈی سے ٹکٹ جاری کیا جو بعدازاں ٹکٹوں پر نظرثانی کے بعد واپس لے لیا گیا۔حلقہ این اے61کا ٹکٹ عامرکیانی اورصوبائی ٹکٹ زیادکیانی کو دیے جانے پر تحریک انصاف کینٹ سے ٹکٹ کے امیدواروں نے بھی تحفظا ت کااظہارشروع کردیا ہے اورپارٹی کے اندررہ کر مخالفت کرنے کا فیصلہ کیا ہے جس کا فائدہ لامحالہ مسلم لیگ ن کے امیدواروں ملک ابراراور اسامہ چوہدری کو ملے گا۔

تحریک انصاف میں ٹکٹوں کی غیر منصفانہ تقسیم پر ایک اور خاتون کارکن بول پڑی ،مظفرگڑھ کے حلقہ این اے 182سے امیدوار مہناز سعید نے قیادت کیخلاف اسلام آباد میں پریس کانفرنس کی انکاکہنا تھا کہ تحریک انصاف نے این اے 182سے تہمینہ دستی کو ٹکٹ دیا ، تہمینہ دستی امریکہ کی دہری شہریت رکھتی ہیں ، دہری شہریت کی وجہ سے الیکشن کمیشن تہمینہ دستی کو الیکشن سے باہر کر دیگا ، پی ٹی آئی کے ورکرز پوچھ رہے ہیں یہ تہمینہ دستی کون ہیں، جمشید دستی پھر سے نہ افواہ اڑا دیں کہ پھر سے پی ٹی آئی مجھے سپورٹ کر رہی ہے ، پی ٹی آئی نہ جمشید دستی سے الحاق کر رہی ہے نہ کر ے گی ، عمران خان نے تبدیلی کا نعرہ بلند کیا تو عوام نے ان کا ساتھ دیا ، لو گ انتظار میں تھے کہ تحریک انصاف وہاں اپنا کوئی امیدوار نامزد کرے لیکن وہاں تہمینہ دستی کو ٹکٹ دیا گیا پارٹی جو فیصلہ کر ے گی ہم اس کی حمایت کریں گے ، میرا مقصد اس سیٹ پر مضبوط امیدوار کو لانا ہے ، تہمینہ دستی سے زیادہ مضبوط امیدوار موجود ہیں اس فیصلے پر نظر ثانی کی جائے۔

متحدہ مجلس عمل نے بھی اسلام آباد کیلئے اپنے نمائندوں کا اعلان کردیا ، حلقہ 54، NA-53کے امیدوار میاں اسلم جبکہ حلقہ NA-52کے امیدوار بلال فیصل ہونگے۔ سابق رکن قومی اسمبلی و حالیہ امیدوار قومی اسمبلی میاں محمد اسلم کاکہنا تھا کہ ترکی میں طیب اردگان کی کامیابی پر اہل پاکستان کو مبارکباد پیش کرتا ہوں امریکہ ، یورپ اور سیکیولر دنیا ان کے خلاف تھی لیکن وہ ڈٹے رہے اور کامیابی ہوئی ہے۔ انہوں نے کہا کہ متحدہ مجلس عمل کے مقابلے میں دوبڑی سیاسی جماعتیں اپنے اختلافات پر قابو نہیں پاسکی ہیں اور ان میں پھوٹ پڑگئی ہے جبکہ اس کے مدمقابل متحدہ مجلس عمل میں پانچ مذہبی جماعتوں کا اتحاد ہے۔ پانچوں دینی جماعتوں نے مل کر اپنے نمائندوں کا چناؤ کیا ہے۔ اسلام آباد میں پانچوں دینی جماعتوں کا نظم مضبوط ہے۔

تحریک انصاف نے اسلام آباد، لاہور، بنوں اور کراچی کیلئے عمران خان کے جلسوں کا شیڈول جاری کر دیا،پی ٹی آئی چیئرمین آج 27 جون کواسلام آباد میٰن بڑے کنونشن سے خطاب کرینگے جبکہ28، 29 جون کو لاہور ،یکم جولائی بنوں اور رزمک اور2 جولائی کو کراچی کا دورہ کریں گے ،تمام مقامات پر پی ٹی آئی کے مقامی قائدین کو تیاریاں مکمل کرنے کی ہدایت کی گئی ہے۔ قومی احتساب بیورو (نیب ) لاہور نے سابق وفاقی وزیرداخلہ چوہدری نثار علی خان کے مقابلے میں این اے 59اور راولپنڈی کے صوبائی حلقے میں مسلم لیگ (ن) کے امیدوار انجینئر قمر الاسلام راجہ کو صاف پانی کمپنی سکینڈل میں کرپشن کے الزامات کے تحت گرفتار کرلیا ، ان سے پوچھ گچھ کی جائے گی انجینئر قمر الاسلام مسلم لیگ (ن) کے سابق دور میں بھی ایم پی اے رہے ہیں قمر الاسلام صاف پانی کمپنی میں پروکیورمنٹ کمیٹی کے سربراہ تھے اورصاف پانی کمپنی کے بورڈز آف ڈائریکٹرز میں شامل تھے ۔

پیر کوشریف خاندان کے خلاف ایون فیلڈ ریفرنس کیس کی سماعت احتساب عدالت میں ہوئی۔ سماعت کے دوران سابق وزیراعظم نواز شریف اور ان کی صاحبزادی مریم نواز کی حاضری سے مزید 7 دن کے استثنیٰ کی درخواست دائر کی گئی درخواست کے ساتھ بیگم کلثوم نواز کی میڈیکل رپورٹ بھی پیش کی گئی جس پر جج محمد بشیر نے نواز شریف اور مریم نواز کو حاضری سے 3 دن کا استثنیٰ دے دیا اس موقع پر پراسکیوٹر جنرل نیب سردار مظفر عباسی نے کہا کہ کلثوم نواز کی بیماری کے حوالے سے ڈاکٹر بہتر بتاسکتے ہیں ان کامزید کہنا تھا کہ جو میڈیکل رپورٹ پیش کی گئی، اس پر کسی ڈاکٹر کے دستخط نہیں ہیں جس پر خواجہ حارث نے جواب دیا کہ بیگم کلثوم نواز مسلسل بیمار اور وینٹی لیٹر پر ہیں۔

راولپنڈی کی ضلعی انتظامیہ نے سیاسی جماعتوں اور انتخابی امیدواروں کی جانب سے مقررہ پیمانے کی خلاف ورزی کر کے لگائے گئے پوسٹر اور بینرز آپریشن کلین اپ کرتے ہوئے ہٹادیے ہیں، الیکشن کمیشن آف پاکستان کے ضابطہ اخلاق کے مطابق پوسٹر اور بینرز کا سائز متعین کیا گیا تھا ،پینا فلیکس، پوسٹرز اور وال چاکنگ پر پابندی بھی عائد تھی۔ اس حوالے سے سیاسی جماعتوں کی مقامی قیادت کوایک خط بھی ارسال کیا گیا جس میں انہیں الیکشن کمیشن کے جاری کردہ ضابطہ اخلاق پر عمل پیرا ہونے کی ہدایت کی گئی۔ڈپٹی کمشنر ڈاکٹر عمر جہانگیرکو الیکشن کمیشن کی جانب سے انتخابات کا جائزہ لینے کے لیے مقرر کیا گیا ہے، ان کی ہدایات پر اسسٹنٹ کمشنر نے شاہراہوں کا دورہ کیا اورسیاسی جماعتوں کے لگائے گئے مقررہ پیمانے سے زائد کے سائن بورڈز، بینرز، اور پوسٹرز ہٹانے کی سختی سے ہدایت کی۔

مزید : ایڈیشن 1